بھارت میں پانچ افراد کی 14 سال کی بچی سے زیادتی

بھارت میں پانچ افراد کی 14 سال کی بچی سے زیادتی
بھارت میں پانچ افراد کی 14 سال کی بچی سے زیادتی

  

نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک )دنیا کی سب سے بڑی جمہوریت ہونے کے دعوے دار بھارت میں چلتی بس میں خاتون کی عزت لوٹنے کا ایک اور واقعہ سامنے آگیا ۔ بھارتی ریاست مدھیا پردیش میں پانچ افرادنے چلتی ہوئی بس میں 14 سالہ بچی کو اجتماعی طورپر جنسی تشدد کا نشانہ بنایا۔ بھارتی میڈیا کے مطابق زیادتی کے بعد لڑکی کو چلتی بس سے باہر پھینک دیا گیا اور حسب معمول ملزم فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے ۔یہ واقعہ ریاست مدھیا پردیشکے گائوں سنگرولی کے قریب پیش آیا۔ گائوں کے لوگوں نے لڑکی کو نیم مردہ حالت میں اٹھا کر ہسپتال پہنچایا۔پولیس کے مطابق، لڑکی اپنی خالہ کے گھر سے واپس اپنے گھر آرہی تھہ جب بس کے ڈرائیور نے اسے لفٹ کی پیشکش کی۔ بدقسمت لڑکی جب بس میں سوار ہوئی تو بس میں موجود مزید چار افرادنے اس سے غلط حرکات شروع کردیں اور اسے زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔بس کے ڈرائیور نے بھیاس سے زیادتی کی اور اسے سڑک پر پھینک کر فرار ہوگئے۔

مزید :

بین الاقوامی -