پاکستانی ٹیم کی مشکلات میں اضافہ ختم ہونے کا نام نہیں لے رہا

پاکستانی ٹیم کی مشکلات میں اضافہ ختم ہونے کا نام نہیں لے رہا

 ڈھاکہ(آن لائن) فٹنس مسائل نے پاکستانی ٹیم میں گھر ہی کر لیا ، دورہ بنگلہ دیش میں قومی ٹیم کے 4 کھلاڑیوں کے بعد راحت علی بھی انجری کا شکار ہوگئے ، ٹیم منیجرنوید اکرم چیمہ کے مطابق فاسٹ باؤلر کی انجری سنجیدہ نوعیت کی نہیں ہے۔ پاکستانی ٹیم کو ایک کے بعد ایک مسائل مشکلات کا سامنا ہے ، بنگالی ٹیم کے خلاف بدترین شکست اور یکے بعد دیگرے کھلاڑیوں کے انجرڈ ہونے نے ٹیم کی تیاریوں کا پول کھول دیا ہے۔ قومی ٹیم کے منیجر نوید اکرم چیمہ نے کہا کہ قومی ٹیم نے ساڑھے تین گھنٹے بھرپور پریکٹس کی جہاں کھلاڑیوں نے بیٹنگ باؤلنگ اور فیلڈنگ تینوں شعبوں میں خامیاں دور کرنے لیے بھرپور تیاری کی۔ ہمسٹرنگ انجری کے شکار راحت علی کے بارے میں بات کرتے ہوئے ٹیم منیجر کا کہنا تھا کہ فاسٹ باؤلر کی انجری اتنی سنجیدہ نوعیت کی نہیں ہے کہ انہیں واپس بھجوا دیا جائے۔ راحت علی نے پریکٹس سیشن میں حصہ نہیں لیا اور مکمل آرام کیا۔ دورہ بنگلہ دیش کے لئے گئی قومی ٹیم میں راحت علی سے پہلے صہیب مقصود ، یاسر شاہ ، سہیل خان اور احسان عادل زخمی ہو کر واپسی کا ٹکٹ کٹوا چکے ہیں۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی