پبلک ہیلتھ انجینئرنگ ڈیپارٹمنٹ بہاولپور  ٹھیکیداروں کا سب انجینئر کیخلاف احتجاج

پبلک ہیلتھ انجینئرنگ ڈیپارٹمنٹ بہاولپور  ٹھیکیداروں کا سب انجینئر کیخلاف ...

  

  بہاول پور(بیورورپورٹ) محکمہ پبلک ہیلتھ انجینئرنگ بہاول پور کے(بقیہ نمبر44صفحہ6پر)

 ٹھیکیداران نے سینئر ٹھیکیدار نذیر احمد رحمانی کی قیادت میں خالد ندیم بخاری سپرنٹنڈنٹ انجینئر (پی ایچ ای)بہاول پور سے انکے دفتر میں ملاقات کی۔ اس موقع پر ٹھیکیداران کی کثیر تعداد بھی موقع پر موجود تھی۔ اس موقع پر ٹھیکیداران نے ایس ای پبلک ہیلتھ کو تحریری درخواست دیتے ہوئے بتایا کہ وہ عرصہ سے محکمہ ہذا میں ٹھیکیداری سر انجام دے رہے ہیں اور وہ گورنمنٹ پاکستان و پنجاب کو سالانہ کروڑوں روپے ٹیکس بھی ادا کرتے اور ہماری ساکھ سے متعلق محکمہ ہذا سے دریافت کیا جا سکتا ہے۔ ٹھیکیداران نے کہا کہ کچھ عرصہ سے بلال رندھاوا نامی سب انجینئر پبلک ہیلتھ حال تعینات سب ڈویژن احمد پور شرقیہ نے ٹھیکیداران کو شدید اذیت میں مبتلا کر رکھا ہے اور ٹھیکیداران سے بلال رندھاوا ناجائز طور پر کمیشن طلب کرتا رہتا ہے جبکہ وہ 3 فیصد اپنے نام پر اور 2 فیصد ایم این اے و ایم پی اے کے نام پر بھی طلب کرتا ہے اور یہی نہیں سکیورٹی بلز کی واپسی پر مبینہ طور پر 20 فیصد طلب کرتا ہے جو کہ نا ممکنات میں شامل ہیں کیونکہ ٹھیکیدار محکمہ میں رائج کمیشن ہی دے سکتے ہیں اتنا زیادہ کمیشن دینے کا مطلب یہ ہے کہ وہ اپنے سکیورٹی بلز کے چیک اِسی بلال رندھاوا کو دے جائیں؟ ٹھیکیداران نے خالد ندیم بخاری سپرنٹنڈنٹ انجینئر پبلک ہیلتھ کو بتایا کہ انکے ایک سینئر ٹھیکیدار نذیر احمد رحمانی احمد پور شرقیہ کے مختلف چکوک میں سولنگ ٹف ٹائل سیور وغیرہ کے مختلف تعمیراتی مکمل کر رہے ہیں جن کی پیمائش کے وقت اِسی بلال رندھاوا نے تقریبا 2 ہزار فٹ سولنگ کی پیمائش جان بوجھ کر نہ جبکہ اسے دوبارہ پیمائش کرنے کے اصرار پر بلا رندھاوا نے کہا کہ اسے معلوم ہے اگر نذیر رحمانی پانچ فیصد کمیشن مبینہ طور پر ایڈوانس دینگے تو پیمائش درست کر دی جائیگی اور انکار پر نذیر احمد رحمانی کو دھکے دیکر دفتر سے نکال دیا اور کہا کہ یہ کمیشن ایم پی اے و ایم این اے کو دینا اور یہ سیاسی لوگ ہمارے ساتھ ہیں تم سے جو ہو سکتا ہے کر لو جس پر ایس ای خالد ندیم بخاری نے معاملات کو دیکھنے اور درستگی کرنے کی یقین دہانی کرائی۔ تاہم بعد ازاں ٹھیکیداران نے محکمہ پبلک ہیلتھ کے سامنے مبینہ کرپٹ سب انجینئر بلال رندھاوا کیخلاف شدید الفاظ میں احتجاج کیا اور کہا کہ قانون کے مطابق بلال رندھاوا کے کئی رشتہ دار مختلف تعمیراتی محکموں میں ٹھیکیداری کرتے ہیں تو ایسی صورت میں اسے بہاول پور ڈویژن سے باہر تعینات کیا جانا ضروری ہے جبکہ میٹرو پولیٹن کارپوریشن بہاول پور کے متعدد سب انجینئرز کا نورِ نظر ہونے کی وجہ سے وہاں اکرم رندھاوا نامی مبینہ فرم کے ذریعے خود بھی ٹھیکیداری کرنے میں مصروف ہے۔ انہوں ٹھیکیدار نذیر احمد رحمانی کو انصاف فراہم کرنے کا مطالبہ بھی کیا۔ دوسری جانب با خبر ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ جس دوران ٹھیکیدار بلال رندھاوا کیخلاف احتجاج کر رہے تھے تو دفتر ہذا کے ہی پچھلے کمرے میں تقریبا محکمہ کے تمام سب انجینئرز بلال رندھاوا کو اکساتے رہے کہ اگر اس نے صلح کی تو اسے برادریسے مبینہ طور پر خارج کر دیا جائیگا جبکہ بلال رندھاوا کا کہنا تھا کہ وہ صلح کرنے سے بہتر نوکری سے استعفی دینے کو ترجیح دیگا۔

احتجاج

مزید :

ملتان صفحہ آخر -