شوگر سکینڈل میں نیب کی طلبی ، صوبائی وزیر میاں اسلم اقبال میدان میں آ گئے ، بیان جاری کر دیا 

شوگر سکینڈل میں نیب کی طلبی ، صوبائی وزیر میاں اسلم اقبال میدان میں آ گئے ، ...
شوگر سکینڈل میں نیب کی طلبی ، صوبائی وزیر میاں اسلم اقبال میدان میں آ گئے ، بیان جاری کر دیا 

  

راولپنڈی (ڈیلی پاکستان آن لائن )میڈیا میں خبر گردش کر رہی ہے کہ شوگر سکینڈل تحقیقات میں نیب نے دو حکومتی وزاءکو طلب کر لیاہے جن میں صوبائی وزیر اسلم اقبال اور صوبائی وزیر خوراک سمیع اللہ چوہدری شامل ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق نیب کی جانب سے طلبی کی خبر پر صوبائی وزیر صنعت و تجارت پنجاب میاں اسلم اقبال کا موقف سامنے آ گیاہے اور ان کا کہناتھا کہ نیب راولپنڈی کی طرف سے شوگر سکینڈل میں طلبی کا کوئی نوٹس نہیں ملا ، چینی کی قیمتوں کے تعین اور شوگر سکینڈل سے میرا کوئی لینا دینا نہیں ہے ، اگر نیب کا کوئی نوٹس ملا تو ضرور وضاحت دوں گا ۔

یاد رہے کہ میڈیا میں خبر زیر گردش ہے کہ نیب نے صوبائی وزیر اسلم اقبال اور صوبائی وزیر خوراک سمیع اللہ چوہدری کو چار مئی کو نیب راولپنڈی میں طلب کر لیاہے ، نیب کی مشترکہ تحقیقاتی ٹیم دونوں حکومتی شخصیات سے تحقیقات کرے گی ، دونوں کو 2018-19 میں شوگر پر دی جانے والی سبسڈی کا ریکارڈ بھی ساتھ لانے کی ہدایت کر دی ہے۔ نیب نے ایکسپورٹ کا اجازت نامہ دینے کا ریکارڈ بھی طلب کر لیاہے ۔ اس کے علاوہ نیب نے شوگر سکینڈل کی تحقیقات میں پنجاب میں شوگر ملز کو دی جانے والی سبسڈی کا ریکارڈ بھی مانگ لیا ہے ۔

مزید :

قومی -