اغوا کاروں کی لڑکی سے مبینہ زیادتی، منہ میں تیزاب ڈال دیا

اغوا کاروں کی لڑکی سے مبینہ زیادتی، منہ میں تیزاب ڈال دیا
 اغوا کاروں کی لڑکی سے مبینہ زیادتی، منہ میں تیزاب ڈال دیا

  

ملتان (مانیٹرنگ ڈیسک)ملتان میں اغوا کاروں نے نوجوان لڑکی سے مبینہ زیادتی کے بعد اس کے منہ میں تیزاب پھینک دیا جسے تشویشناک حالت میں نشتر ہسپتال ملتان منتقل کر دیا گیا ہے۔بستی ملوک کی رہائشی 23 سالہ رضیہ بی بی اپنے ہمسائیوں کے گھر عید ملنے جا رہی تھی کہ راستے میں علاقے کے اوباش نوجوانوں نے اسے اغواءکرکے مبینہ زیادتی کا نشانہ بنا ڈلا اور بعد ازاں متاثرہ لڑکی کے منہ میں تیزاب ڈال کر فرار ہو گئے۔ متاثرہ لڑکی کو تشویشناک حالت میں نشتر ہسپتال داخل کرایا گیا ہے جہاں پر ڈاکٹروں کے مطابق رضیہ کو تیزاب پلانے کیساتھ ساتھ اس کا گلا دبانے کی بھی کوشش کی گئی جس کی وجہ سے لڑکی کی حالت تشویشناک ہے۔ ڈاکٹروں کی جانب سے میڈیکل رپورٹ جاری نہ ہونے کی وجہ سے تھانہ بستی ملوک کی پولیس نے مقدمہ درج کرنے سے بھی انکار کر دیا ہے جس کا فائدہ اٹھاتے ہوئے لڑکی سے مبینہ زیادتی کرنیوالے تینوں ملزمان بھی اپنے گھروں سے فرار ہو گئے ہیں جس پر متاثرہ خاندان انصاف کے اصول کیلئے سراپا احتجاج ہے۔

مزید : ملتان