چین ،10جاپانی کمپنیوں کو اجارہ داری قائم کرنے پر 200ملین ڈالر جرمانہ

چین ،10جاپانی کمپنیوں کو اجارہ داری قائم کرنے پر 200ملین ڈالر جرمانہ

  

                                      شنگھائی (اے پی پی) چین نے گاڑیوں کے پرزہ جات تیار کرنے والی 10 جاپانی کمپنیوں کو اجارہ داری قائم کرنے پر200 ملین ڈالر سے زائد کا جرمانہ عائد کردیا۔ ذرائع ابلاغ کے مطابق قومی ترقیاتی و اصلاحاتی کمیشن نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ جاپانی کمپنیاں10 سال سے اجارہ داری قائم کرکے پرزہ جات کی زیادہ قیمتیں وصول کررہی تھیں۔ رپورٹ کے مطابق اجارہ داری قوانین کی خلاف ورزی کرنے والی جاپانی کمپنیوں پر201ملین ڈالر جرمانہ عائد کیا گیا ہے جو کہ اجارہ داری قوانین کی خلاف ورزی کرنے کی مد میں سب سے بڑا جرمانہ ہے۔ جاپانی کمپنیوں نے گاڑیوں کے پرزہ جات کی قیمتوں میں غیرقانونی اضافہ اورمختلف ماڈل کی گاڑیوں کوختم کیا۔ رپورٹ کے مطابق قومی ترقیاتی و اصلاحاتی کمیشن نے سومی ٹومو الیکٹرک کو سب سے زیادہ290.4 ملین ین جرمانہ کیا جبکہ دیگرکمپنیوں میں ڈینسو، الیسان، مٹسوبشی الیکٹرک، مٹسوبا،پازاکی اور فروکاوا الیکٹرک شامل ہیں ۔ ان کمپنیوں نے جنوری 2000ءسے فروری 2010ءکے دوران گاڑیوں کے پرزہ جات کی قیمتوں میں غیرقانونی اضافہ کیا۔

مزید :

کامرس -