سعودی عرب میں غیر ملکیوں کے لئے نئے قوانین متعارف

سعودی عرب میں غیر ملکیوں کے لئے نئے قوانین متعارف
سعودی عرب میں غیر ملکیوں کے لئے نئے قوانین متعارف
کیپشن: sudi

  

جدہ (مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی حکا نے غیر ملکی ملازمین کی سپانسر شپ کی تبدیلی کے متعلق نئے ضوابط متعارف کرواتے ہوئے کہا ہے کہ مالکان کو سپانسر شپ تبدیلی کی درخواست کے بعد پانچ دن کے دوران اعتراضات جمع کروانے کی اجازت ہوگی۔ وزارت لیبر کے نمائندہ تاثیر المفارج کا کہنا ہے کہ نئے ضوابط کا مقصد مالکان اور ملازمین دونوں کے حقوق کا تحفظ ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ اس سے نہ صرف سپانسر شپ تبدیلی کا عمل تیز ہوگا بلکہ غیر ملکی ملازمین کیلئے اس تبدیلی میں مائل رکاوٹوں کو بھی دور کرنے میں مدد ملے گی۔ نئے لیبر ضوابط کے مطابق اگر مالکان باہر سے آنے والے ملازمین کو تین ماہ کے دوران کام اور رہائش کاپرمٹ فراہم کرنے میں ناکام رہیں تو ملازمین سپانر کی تبدیلی کا حق رکھتے ہیں۔ المفارج کا یہ بھی کہنا تھا کہ ملازمین عارضی ملازمت کیلئے مملکت میں قائم پرائیویٹ ریکروٹمنٹ کمپنیوں سے بھی رابطہ کرسکتے ہیں تاہم بھگوڑے اور ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کے مرتکب ملازمین کی درخواستیں رد کردی جائیں گی۔ جن ملازمین کے پاسپورٹ کی معیاد ختم ہوچکی ہو وہ بھی سپانسر شپ کی تبدیلی کے حقدار ہوں گے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -