حکومتی اتحادی فضل الرحمن بھی دھاندلی پر خاموش نہ رہ سکے: تونسہ میں دوبارہ الیکشن کرانے کا مطالبہ

حکومتی اتحادی فضل الرحمن بھی دھاندلی پر خاموش نہ رہ سکے: تونسہ میں دوبارہ ...
حکومتی اتحادی فضل الرحمن بھی دھاندلی پر خاموش نہ رہ سکے: تونسہ میں دوبارہ الیکشن کرانے کا مطالبہ

  

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) حکومتی اتحادی اور جمعیت علمائے اسلام(ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمن بھی الیکشن میں حکومتی دھاندلیوں پر خاموش نہ رہ سکے اور تونسہ میں دوبارہ الیکشن کرانے کا مطالبہ کر دیا۔

دنیا نیوز کے مطابق کراچی میں ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمن کا کہنا تھا کہ تونسہ کے ضمنی الیکشن میں بے پناہ دھاندلی کی گئی۔ حکومتی امیدوار کو جتوانے کیلئے وسائل کا بے دریغ استعمال کیا گیا۔پولنگ کے دن ہمارے امیدوار کو ہراساں کیا گیا اور ہمارے ووٹرز پر تشدد کیا گیا تاکہ وہ اپنا حق استعمال نہ کر سکیں۔ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ تونسہ میں دوبارہ الیکشن کرایا جائے۔ الیکشن کمیشن اس کا نوٹس لے۔ان کا کہنا تھا کہ ہم مدارس کیخلاف کوئی سازش کامیاب نہیں ہونے دینگے۔ہم محسوس کر رہے ہیں کہ آزادی کا مقصد ابھی پورا نہیں ہوا۔واضح رہے کہ تونسہ کے ضمنی الیکشن میں ن لیگ کا امیدوار کامیاب ہوا تھا۔

مزید : قومی /اہم خبریں