نارووال، ایمبولنین ڈرائیور اور ڈی ایچ کیو ہسپتال کے سکیورٹی عملہ میں لڑائی،15افراد زخمی

نارووال، ایمبولنین ڈرائیور اور ڈی ایچ کیو ہسپتال کے سکیورٹی عملہ میں ...

نارووال(نمائندہ خصوصی) پرائیویٹ ایمبولینس ڈرائیور اور ڈی ایچ کیو کے سکیورٹی عملہ کے درمیان گھمسان کی جنگ میں 15 افراد زخمی ہوگئے ۔ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرز ہسپتال نارووال کی ایمرجنسی وارڈ کے باہر پرائیویٹ ایمبولینس کا ڈرائیور محمد طارق مریض کو لے جانے کیلئے بیٹھا رہا تھا کہ ہسپتال کے سکیورٹی گارڈ نے ڈرائیور کو فوری ایمبولینس ہٹانے کیلئے کہا جس پر ڈرائیور اور سکیورٹی گارڈ کے درمیان جھگڑا شروع ہو گیا پہلے سکیورٹی گارڈ اور اس کے ساتھیوں نے ایمبولینس ڈرائیور کو شدید تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔ تشویشناک حالت کی وجہ سے ڈرائیور کے اہل خانہ اور اہل علاقہ ڈنڈے اور آہنی راڈ لیکر ڈسٹرکٹ ہسپتال پہنچ گئے اور سکیورٹی گارڈ کو تشدد کا نشانہ بنانا شروع کیا ۔ اسی اثنا ء میں ڈسٹرکٹ ہسپتال کے تمام سکیورٹی گارڈ زبھی جمع ہو گئے ۔ڈسٹرکٹ ہسپتال میں ایمبولینس ڈرائیور کے اہل خانہ اور سکیورٹی گارڈ زمیں گھمسان کی جنگ شروع ہو گئی لڑائی کے دوران ڈنڈوں اور سوٹوں کا آزادنہ استعمال کیا گیا۔ لڑائی کے دوران دونوں اطراف سے 15 افراد جن میں سکیورٹی اہلکار عدیل خان ،بشارت علی ، محمد اقبال، محمد قادر اور محمد پرویز سمیت دیگر زخمی ہو گئے ۔ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال کے ایم ایس ڈاکٹر محمد یونس نے واقع کی اطلاع ملنے پر فوری سٹی پولیس کی بھاری نفری کو بلوالیا ۔پولیس نے موقع پر پہنچ کر دونوں اطراف کے افراد کو حراست میں لے لیا اور تفتیش شروع کردی ۔لڑائی میں زخمی ہونے والے افراد کو ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال میں طبی امداد دی جارہی ہے۔

نارووال ،لڑائی

مزید : صفحہ آخر