جعلی کلیم کا انتقال خارج ، مافیا کی رستانی، قیمتی اراضی ذاتی کالونی میں شامل کرنیکا انکشاف

جعلی کلیم کا انتقال خارج ، مافیا کی رستانی، قیمتی اراضی ذاتی کالونی میں شامل ...

بہاولپور(ڈسٹرکٹ رپورٹر)جعلی کلیم کی بناپر خارج ہونیوالا22 کروڑ روپے سے زائد مالیت کا37 کنال رقبہ لینڈمافیانے اپنی کالونی میں شامل کرکے فروخت کرڈالا سابق اے ڈی سی جی اورمقامی ایس ایچ او کورشوت کے طورپرپلاٹ تحفہ میں دیدئیے گئے ۔شہریوں کی نشاندہی پربورڈ آف ریونیوپنجاب نے کاروائی شروع کردی ۔ تفصیل کے مطابق موضع حمایتی میں کھاتہ نمبر233 عزیزاں (بقیہ نمبر47صفحہ7پر )

بی بی زوجہ خوشی کے نام پرجعلی کلیم کی بناپر37 کنال 13 مرلے رقبہ کاانتقال نمبر5285 مورخہ16/9/96 درج ہوا شہری محمدرمضان وغیرہ نے ممبربورڈ آف ریونیوآفتاب مانیکا کوتحریری درخواست دی کہ مذکورہ بالا انتقال جعلی کلیم کی بناپردرج ہواہے جس پرتحقیقات کے بعدانہوں نے2010 میں انتقال خارج کردیااس کے بعدلینڈمافیا کے سرغنہ عبدالمجید دکی اورسہیل مجیددکی نے مذکورہ بالاخاتون سے اونے پونے رقبہ خریدکرلیااورانتقال کے اخراج پرعمل درآمد نہ ہونے دیااس دوران مبینہ طورپرانہوں نے موجودہ اے ڈی سی جی اشتیاق جاویدکے بھائی شاہدندیم ولدتاج محمداورمتعلقہ ایس ایچ او راناحبیب الرحمن کی بیوی فوزیہ قمرکے نام پرتحفتاً پلاٹ انتقال کرادیئے اورکسی قسم کی کاروائی نہ ہونے دی اورمذکورہ بالارقبہ کواپنی غیرقانونی نیوسیٹ لائٹ ٹاؤن میں شامل کرکے سادہ لوح شہریوں کوفروخت کرنے کاسلسلہ شروع کررکھاہے ذرائع نے بتایاہے کہ مذکورہ بالالینڈمافیانے دیگربھی دربارمحل ٹاؤن المجیدپیراڈائز، نیوسیٹ لائٹ ٹاؤن کالونیاں بناکرشہریوں کوفروخت کرنے کاکام شروع کیاگیاہے اوران کاٹی ایم اے میں کوئی ریکارڈ نہ ہے اورنہ ہی ٹی ایم اے کے نام پرمساجد گلیوں اورپارکس کارقبہ انتقال کرایاگیاہے عوامی وسماجی حلقوں نے حکام بالاسے سخت نوٹس لینے کامطالبہ کیاہے اس حوالے سے جام سہیل مجیددکی نے کہاہے کہاکہ ان کی کالونیاں 2010 سے قبل سے ہیں ٹی ایم اے کے نام رقبہ منتقل کرانے کاقانون ان پرلاگونہیں ہوتاہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر