”پتا نہیں کیسا بے غیرت بھائی ہے جو ان جیسیوں کو کھلا چھوڑ کر ۔۔۔ “ ماورہ حسین کی ایسی ’ قابل اعتراض‘ تصویر سامنے آگئی کہ پاکستانی غصے سے آگ بگولہ ہوگئے

”پتا نہیں کیسا بے غیرت بھائی ہے جو ان جیسیوں کو کھلا چھوڑ کر ۔۔۔ “ ماورہ حسین ...
”پتا نہیں کیسا بے غیرت بھائی ہے جو ان جیسیوں کو کھلا چھوڑ کر ۔۔۔ “ ماورہ حسین کی ایسی ’ قابل اعتراض‘ تصویر سامنے آگئی کہ پاکستانی غصے سے آگ بگولہ ہوگئے

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) اداکارہ ماورہ حسین اپنی فلم جوانی پھر نہیں آنی 2 کی پرموشن میں مصروف ہیں اور اس دوران مختلف شہروں اور تقریبات میں جارہی ہیں۔ ہر تقریب میں ان کا لباس بھی مختلف ہوتا ہے جو توجہ کا مرکز بنا رہتا ہے تاہم اب انہوں نے ایسا لباس زیب تن کرلیا کہ پاکستانیوں کو شدید غصہ چڑھ گیا اور سوشل میڈیا پر تنقید کا طوفان امڈ آیا۔

فلم کی پرموشن کے دوران ماورہ حسین نے سیاہ رنگ کا لباس زیب تن کیا جو شاید پاکستانیوں کے شرم و حیا کے معیار پر پورا نہیں اترتا۔ ماورہ کی اس لباس میں جیسے ہی تصاویر سامنے آئیں پاکستانی ان پر ٹوٹ پڑے۔

مہرش نے کہا ’ بکری کی شکل ہے اور سیکسی بنی پھرتی ہے‘۔

میمن نے لکھا ’ ڈوب کے مر جانا چاہیے‘۔

عبداللہ چیمہ نے دونوں بہنوں ماورہ اور عروہ کو تنقید کا نشانہ بنایا اور لکھا ’ بے شرم ، بے حیا، یہ دونوں بہنیں کیسا پاکستانی کلچر پیش کر رہی ہیں ، یار کچھ تو شرم ہوتی ہے‘۔

مصفرہ طلحہ نے لکھا ’ ہم پاکستانی بہت محب وطن ہیں اور ہم ان اداکاراﺅں کو پسند کرتے ہیں جو ہماری ثقافت اور رواج کے مطابق چلیں ‘۔

حارث پاشا نے ماورہ حسین کے پہنے ہوئے لباس جیسے کپڑوں پر پابندی کو نیا پاکستان سے جوڑ دیا اور لکھا ’ اگر عمران خان نے پاکستان کو مدینہ جیسی ریاست بنانا ہے تو اس بے حیائی کو بند کرنا ہوگا‘۔

حمنہ خان نے لکھا ’ کہتے ہیں نا عورت کا لباس ہی اس کے گھر کے مرد کی نشانی ہے‘۔ حوریہ ہاشمی نے اسی بات کو آگے بڑھاتے ہوئے کہا ’ کچھ تو شرم کر لو مرنا بھی ہے ایک دن پھر کیا انجام ہوگا تم جیسوں کا، اللہ معاف کرے پتا نہیں کیسا بے غیرت بھائی ہے جو ان جیسیوں کو کھلا چھوڑ کر ان کی کمائی کھاتاہے‘۔

مزید : تفریح