یہ خاتون وکالت چھوڑ کر پائلٹ بن گئی، لیکن کیوں؟ آج تک کسی نے بھی اس وجہ سے ایسا نہ کیا ہوگا

یہ خاتون وکالت چھوڑ کر پائلٹ بن گئی، لیکن کیوں؟ آج تک کسی نے بھی اس وجہ سے ...
یہ خاتون وکالت چھوڑ کر پائلٹ بن گئی، لیکن کیوں؟ آج تک کسی نے بھی اس وجہ سے ایسا نہ کیا ہوگا

  

روم(نیوز ڈیسک)اطالوی خاتون کرسٹیانا اچھی بھلی کامیاب وکیل تھیں لیکن اُن کے سابقہ بوائے فرینڈ نے ایک دن ایسا جملہ کہہ دیا کہ جس نے کرسٹیانا کو وکالت چھوڑ کر ایک اور شعبہ اختیار کرنے پر مجبور کر دیا۔ یہ چھ سال قبل کی بات ہے کہ جب ایک کمرشل پائلٹ کے ساتھ ان کا رومانوی تعلق چل رہا تھا۔ بدقسمتی سے ان کے درمیان کچھ تلخیاں پیدا ہو گئیں اور یہ تعلق ختم ہو گیا، لیکن جاتے جاتے مغرور پائلٹ ایریکا سے یہ کہہ گیا کہ وہ صرف وکالت کر سکتی ہے، جہاز اڑانا اس کے بس کی بات نہیں۔

کرسٹیانا کہتی ہیں کہ بس اسی دن انہوں نے فیصلہ کر لیاکہ وہ پائلٹ بن کر دکھائیں گی۔ انہوں نے وکالت کو خیرباد کہا اور جہاز اڑانے کی ٹریننگ لینے لگیں۔ اس بات کو چھ سال بیت چکے ہیں، اب وہ ایک ماہر پائلٹ ہیں ہر قسم کے چھوٹے بڑے کمرشل ہوائی جہاز اُڑاتی ہیں۔

کرسٹیانا کا کہنا ہے کہ ان کے سابق بوائے فرینڈ نے انہیں طعنہ دیا تھا کہ وہ اس قابل نہیں ہیں کہ پائلٹ بن سکیں، جسے وہ برداشت نہیں کر سکتی تھیں۔ انہوں نے اس بات کو دل پر لے لیا اور محض اپنے سابقہ بوائے فرینڈ کو غلط ثابت کرنے کیلئے پائلٹ بن کر دکھا دیا۔ اگرچہ انہوں نے فلائنگ سیکھنے کا فیصلہ تو اپنے بوائے فرینڈ کا غرور توڑنے کیلئے کیا تھا لیکن اب کہتی ہیں کہ فلائنگ انہیں اتنی پسند آئی ہے کہ اب یہی ان کا کیرئیر ہے۔ وہ پیچھے مڑ کر نہیں دیکھنا چاہتیں اور باقی پیشہ ورانہ زندگی ہوابازی کے شعبے میں ہی گزارنا چاہتی ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس