شاہ محمودقریشی کاڈنمارک کے ہم منصب سے ٹیلیفونک رابطہ،مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت خاتمے سے آگاہ کیا

شاہ محمودقریشی کاڈنمارک کے ہم منصب سے ٹیلیفونک رابطہ،مقبوضہ کشمیر کی خصوصی ...
شاہ محمودقریشی کاڈنمارک کے ہم منصب سے ٹیلیفونک رابطہ،مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت خاتمے سے آگاہ کیا

  


اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیر خارجہ شاہ محمودقریشی نے ڈنمارک کے ہم منصب سے ٹیلیفونک رابطہ کیا اور مقبوضہ کشمیرکی خصوصی حیثیت خاتمے سے آگاہ کیا ،میڈیا رپورٹس کے مطابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ کشمیرمیں آبادیاتی تناسب تبدیلی کیلئے بھارت نے یکطرفہ اقدام اٹھایا،بھارت نے مقبوضہ کشمیرکا کرفیوکے ذریعے محاصرہ کررکھاہے،مقبوضہ کشمیرمیں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں میں اضافہ ہورہاہے،وزیر خارجہ نے کہا کہ بھارتی اقدامات عالمی قوانین،سلامتی کونسل کی قراردادوں کے منافی ہے،سلامتی کونسل کے سیکرٹری جنرل اور سیکیورٹی کونسل نے نوٹس لیاہے،شاہ محمود قریشی کا کہناتھا کہ اس وقت 9 لاکھ سے زائد بھارتی فوج مقبوضہ کشمیرمیں موجودہے، مقبوضہ وادی میں کرفیوکے باعث خوراک اورادویات تک میسرنہیں،وزیر خارجہ نے کہا کہ ہمیشہ سے مذاکرات کےلئے تیارتھے اورتیارہیں،ڈنمارک کشمیریوں کی مشکلات میں کمی کیلئے کرداراداکرے۔

وزیرخارجہ ڈنمارک نے معاملے کومذاکرات کے ذریعے حل کرنے پرزور دیتے ہوئے کہا کہ 2ایٹمی قوتوں کے درمیان کشیدگی خطرناک ثابت ہوسکتی ہے،پاک بھارت کشیدگی کی صورتحال پرتشویش ہے،فریقین کشیدگی کے خاتمے کیلئے مذاکرات کاراستہ اپنائیں۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد


loading...