عدالت نے کے الیکٹرک کو جواب کیلئے ستمبر کے آخری ہفتے تک مہلت دے دی

عدالت نے کے الیکٹرک کو جواب کیلئے ستمبر کے آخری ہفتے تک مہلت دے دی
عدالت نے کے الیکٹرک کو جواب کیلئے ستمبر کے آخری ہفتے تک مہلت دے دی

  


کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) سندھ ہائی کورٹ میں کے الیکٹرک کیخلاف آئینی درخواست کی سماعت،عدالت نے کے الیکٹرک کو جواب کیلئے ستمبر کے آخری ہفتے تک مہلت دے دی۔

نجی ٹی  وی کے مطابق سندھ ہائی کورٹ میؓں حالیہ بارشوں  میں کرنٹ لگنے سے 20 سے زائد افراد کی ہلاکت سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔درخواست گزار کا کہنا تھا کہ کے الیکٹرک کی غفلت اورانفراسٹکچرکی کمزوری کے باعث بیس لوگ جاں بحق ہوئے۔عدالت نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ دیگر اداروں کی بھی نااہلی ہے، کنڈے لگے ہوے ہیں،کیبل والوں کا نظام بھی ہے۔درخواست گزار کا کہنا تھا کہ اس دفعہ بارش میں جتنی ہلاکتیں ہوئی ہیں پہلے کبھی نہیں ہوئیں۔اس موقع پر کے الیکٹرک کے وکیل نے کورٹ میں  وکالت نامہ جمع کرایا جس پر عدالت نے کے الیکٹرک کو جواب کیلئے ستمبر کے آخری ہفتے تک مہلت دے دی۔درخواست گزار کا موقف ہے کہ کے الیکٹرک کراچی کے شہریوں کو تحفظ دینے میں ناکام رہی ہے، نیپرانے بھی نااہلی کامظاہرہ کیاہے،نیپرانے کے الیکٹرک کالائسنس معطل کرنیکی بجائے صرف رپورٹ طلب کی، کے الیکٹرک کا  لائسنس منسوخ کیاجائےجبکہ معزز عدالت مرنے والے افراد کے اہلخانہ کومناسب معاوضہ دلوایا جائے۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی


loading...