پنجاب فوڈاتھارٹی سروس ریگولیشن میں ترامیم،مالی سال 2019ـ20کے بجٹ کی منظوری

پنجاب فوڈاتھارٹی سروس ریگولیشن میں ترامیم،مالی سال 2019ـ20کے بجٹ کی منظوری
پنجاب فوڈاتھارٹی سروس ریگولیشن میں ترامیم،مالی سال 2019ـ20کے بجٹ کی منظوری

  


لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن)پنجاب فوڈ اتھارٹی کے 30ویں بورڈ اجلاس  میں سروس ریگولیشن میں ترامیم اورمالی سال 2019ـ20کے بجٹ سمیت اہم منصوبوں کی منظوری دے  دی گئی ہے۔

تفصیلات کےمطابق  پنجاب فوڈ اتھارٹی کا اجلاس چیئر مین پنجاب  کی زیرِصدارت ہیڈکوارٹر میں ہوا، پنجاب فوڈ اتھارٹی کے30ویں بورڈ اجلاس کی ابتداء سائنٹیفک پینل کے سینئر ممبر ڈاکٹر فیصل مسعود مرحوم کے لیے فاتحہ خوانی سے ہوئی۔ چیئر مین پنجاب فوڈ اتھارٹی عمر تنویر بٹ کی صدارت میں ہونے والے اجلاس میں  پنجاب فوڈاتھارٹی سروس ریگولیشن میں ترامیم سمیت متعدد منصوبوں کی منظوری دی گئی۔ پنجاب فوڈاتھارٹی کے مالی سال 2019ـ20کے بجٹ کی منظوری اورکوٹہ سسٹم کے تحت ملازمین کو حج پر بھیجنے کی تعداد2 سے بڑھا کر 10کر دی گئی ہے۔پنجاب فوڈا تھارتی کی جانب سے عائد کردہ فیس اور جرمانوں کی مؤثرریکوری کے لیے انفورسمنٹ انسپکٹرکی تعداد میں اضافہ کر دیا گیا۔

ڈی جی فوڈ اتھارٹی کیپٹن (ر) محمد عثمان کا کہناتھا کہ   اجلاس  میں ریسورس اینڈ لائسنسنگ اورٹیکنیکل ونگ کے لیے 15کلٹس اور 5اے پی وی گاڑیاں خریدنے کی بھی منظوری دی گئی ہے،ہیومن ریسورس کی کمی پورا کرنے کے لیے ٹرینی انفورسمنٹ انسپکٹرجبکہ ٹیکنیکل ونگ کے لیے ٹرینی آفیسر کی بھرتیوں کی منظوری ہوئی ہے،بورڈ ممبران نے ریسورس اینڈ لائسنسنگ ونگ کے افسران اور اہلکاروں کے لیے فیلڈ الاؤنس کی بھی منظوری دے ہے،لیبل کی سکروٹنی فیس500 سے بڑھا کر ایک ہزار کر دی گئی ہے۔ایجنڈے میں موجودتما م آئٹمز کی منظوری چیئرمین عمر تنویر بٹ کی جانب سے دے دی گئی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ادارے کی کارکردگی مزید بہتر بنانے اور افسران کی حوصلہ افزائی کیلئے ہر ممکن سہولیات فراہم کی جائیں گی۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور


loading...