امریکی میزائل ٹیسٹ،روس اور چین نے سلامتی کونسل کے ہنگامی اجلاس کا مطالبہ کردیا

امریکی میزائل ٹیسٹ،روس اور چین نے سلامتی کونسل کے ہنگامی اجلاس کا مطالبہ ...
امریکی میزائل ٹیسٹ،روس اور چین نے سلامتی کونسل کے ہنگامی اجلاس کا مطالبہ کردیا

  


ماسکو/ بیجنگ (آئی این پی) امریکا کی طرف سے درمیانے فاصلے تک مار کرنے والے ایک کروز میزائل کے تجربے کے بعد روس اور چین نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کا ایک ہنگامی اجلاس بلانے کا مطالبہ کر دیا ہے۔یہ دونوں ممالک پندرہ رکنی سلامتی کونسل کے امریکا کی طرح مستقل رکن ہیں۔

امریکا نے آئی این ایف معاہدے سے الگ ہونے کے بعد پہلی مرتبہ ایسا کوئی تجربہ کیا ہے۔امریکا اور روس کے مابین تخفیف اسلحہ کا معاہدہ(آئی این ایف) سرد جنگ کے زمانے میں طے ہوا تھا اور واشنگٹن نے چند ہفتے قبل ہی اس معاہدے سے علیحدگی اختیار کر لی تھی۔روس کے مطابق یہ ٹیسٹ اس بات کا ثبوت ہے کہ امریکا نے آئی این ایف معاہدے سے نکلنے کا منصوبہ پہلے ہی سے بنا رکھا تھا۔واضح رہے کہ امریکا نے آئی این ایف معاہدے سے الگ ہونے کے بعد گزشتہ روز درمیانے درجے کے ایک کروز میزائل کا تجربہ کیا۔کروز میزائل نے پانچ سو کلومیٹر کا فاصلہ طے کرتے ہوئے اپنے ہدف کو کامیاب نشانہ بنایا جس پر ماسکو نے شدید تنقید کی۔ روس نے امریکا پر عسکری کشیدگی میں اضافہ کرنے کا الزام عائد کیا۔یاد رہے کہ امریکا اور روس کے مابین تخفیف اسلحہ کا معاہدہ (آئی این ایف) سرد جنگ کے زمانے میں طے پایا تھا اور واشنگٹن نے چند ہفتے قبل ہی اس معاہدے سے علیحدگی اختیار کر لی تھی۔

مزید : بین الاقوامی


loading...