ملک میں قدرتی گیس ختم،سردیوں میں  شدید لوڈشیڈنگ ہوگی،عمر ایوب کا انکشاف

    ملک میں قدرتی گیس ختم،سردیوں میں  شدید لوڈشیڈنگ ہوگی،عمر ایوب کا انکشاف

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)سینیٹ کی فنکشنل کمیٹی برائے کم ترقی یا فتہ علاقہ جات میں وفاقی وزیر توانائی عمر ایوب نے انکشاف کیا کہ ملک میں قدرتی گیس کی پیداوار میں مسلسل کمی ہو رہی ہے اور آائندہ سردیوں میں بھی گیس لوڈ شیڈنگ رہے گی جس کی وجہ مقامی گیس کی پیداوار میں کمی اور طلب میں اضافہ ہے، اگلے سال تک سندھ کے پاس بھی کسی کو دینے کیلئے گیس نہیں ہو گی،ملک میں گیس کی مکمل طلب ساڑھے سات ارب مکعب فٹ تک ہے جبکہ پیداوار ساڑھے تین ارب مکعب فٹ ہے،باقی امپورٹ کر کے سبسڈی کے ساتھ فراہم کی جاتی ہے جس کی وجہ سے سرکولر ڈیٹ میں بھی اضافہ ہوتا ہے،تمام مسائل مشترکہ مفادات کونسل میں زیر بحث لائے جا چکے ہیں، جلد اسلام آباد میں ایک کانفرنس منعقد ہوگی جس میں تمام صوبوں کے وزراء اعلی سمیت صوبوں کے ماہرین بھی شرکت کریں گے اور ایک متفقہ لائحہ عمل بھی اختیار کیا جائے گا اور رپورٹ سی سی آئی میں پیش کی جائے گی۔ جمعرات کو کمیٹی کا اجلاس چیئرمین سینیٹر محمد عثمان خان کاکڑ کی زیر صدارت ہوا۔چیئرمین کمیٹی سینیٹر محمد عثمان خان کاکڑنے کہا کہ صوبہ بلوچستان کے کچھ اضلاع میں سردیوں کے موسم میں درجہ حرارت منفی 19تک پہنچ جاتا ہے ہمارے صوبے سے نکلنے والی گیس پورے ملک میں فراہم کی جاتی ہے مگر ہمارے صوبے میں گیس سخت سردی میں نہیں ملتی، لوگ انتہائی قیمتی نایاب اور صدیوں پرانے درختوں کو ایندھن کے طور پر استعمال کرتے ہیں۔ کمیٹی اجلاس میں صوبہ بلوچستان سے تعلق رکھنے والے 13انجینئرز کو مستقل کرنے کے معاملے کا تفصیل سے جائزہ لیا گیا۔ چیئرمین کمیٹی سینیٹر محمد عثمان خان کاکڑ نے کہا کہ یہ معاملہ پیٹرولیم کمیٹی میں بھی اٹھایا تھا ان انجینئرز کو آغاز حقوق بلوچستان کے تحت ریگولر کیا جائے جس پر وفاق وزیر توانائی عمر ایوب نے کہا کہ یہ انجینئرز عدالت گئے تھے اپنے کیسز واپس لیں ان کو مستقل کر دیا جائے گا جس کی یقین دہانی کراتا ہوں۔

عمر ایوب

مزید :

صفحہ اول -