ہربنس پور میں چھت گرنے سے مرنے والے چاروں افراد سپرد خاک

ہربنس پور میں چھت گرنے سے مرنے والے چاروں افراد سپرد خاک

  

لاہور (کرائم رپورٹر +خبرنگار)ہر بنس پورہ روڈ اسماعیل ٹاؤن میں چھت کے ملبے تلے دب جانے سے تین سگے بھائیوں سمیت چار افراد کی ہلاکت پرعلاقے کی فضا سوگوار ہو گئی۔ کمسن بچے کامران اور اس کے والد صابر خان سمیت چار افراد کے جنازے اٹھائے گئے تو ہرآنکھ اشکبار اور پورے علاقے میں کہرام برپا تھا۔ بد قسمت گھرانہ کے بارے بتایا گیا کہ گھر کے مالک حبیب اللہ خان نے اپنا گھر تعمیر کر نے کے لیے چند روز قبل کرائے پر اس گھر میں رہائش رکھی اورآج اپنے گھر میں شفٹ ہونا تھا پورے گھر کو موت نے اپنے گھیرے میں لے لیا۔ مالک مکان محمد اجمل نے بارش سے چند روز قبل کئی فٹ گہرے گھرکی نئے سرے سے بنیادیں رکھیں اور ساتھ ہی 30فٹ اونچی دیوار کھڑی کر دی جو کہ بارش کے چند گھنٹے بعدرات سوتے بد قسمت گھرانے پر موت بن کر اچانک گر پڑی اور ساتھ ہی بوسیدہ مکان کی چھت گرنے پر 5خواتین سمیت گھر کے 16افراد ملبے تلے دب گئے۔ افسوس ناک واقعہ کے باوجود حکمران جماعت یا ضلعی انتظامیہ سے کوئی بھی تاحال خبر لینے نہیں پہنچا۔ ملبے تلے دب جانے کے باعث جاں بحق ہو نے والے تین افراد 25سالہ صابر خان،28سالہ اعظم خان اور 26سالہ اسلم خان کے بارے بتایا گیا ہے کہ وہ تینوں سگے بھائی تھے۔ جبکہ جاں بحق ہو نے والا کامران صابر خان کابیٹا تھا  بدقسمت گھرانے کے سربراہ عمر رسیدہ حبیب اللہ خان نے زخمی حالت میں روزنامہ پاکستان کو بتایا کہ وہ کسی قسم کی کارروائی نہیں کروانا چاہتا ہے۔ اور اپنا مقدمہ اللہ تعالیٰ کی ذات پر چھوڑ تا ہے

مزید :

علاقائی -