اداروں میں اصلاحات کیلئے پہلی بار کوئی حکومت کا کر رہی ہے: چودھری سرور

              اداروں میں اصلاحات کیلئے پہلی بار کوئی حکومت کا کر رہی ہے: چودھری ...

  

 لاہور(جنرل رپورٹر)گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور سے صوبائی وزیر قانون راجہ محمد بشارت سمیت 3صوبائی وزراء کی ملاقات جبکہ گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان اصولوں پر سمجھوتہ کر نیوالا نہیں ڈٹ جانے والا لیڈر ہے  اداروں میں اصلاحات کے لیے پہلی بار کوئی حکومت کام کر رہی ہے  تفصیلات کے مطابق گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور سے صوبائی وزیر قانون راجہ محمد بشارت،صوبائی وزیر خزانہ ہاشم جواں بخت اور صوبائی وزیر ہائر ایجوکیشن یاسر ہمایوں نے گور نر ہاؤس لاہور میں مشتر کہ طور پرملاقات کی جس میں سیاسی اور حکومتی امور سمیت مختلف ایشوز کے بارے میں تفصیلی بات چیت کی گئی ملاقات کے دوران گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا کہ تمام حکومتی سٹیک ہولڈرز ایک پیج پرہیں اورملک وقوم کو مضبو ط بنانے کیلئے کام کر رہے ہیں  اْنہوں نے کہا کہ ملک کو عدم استحکام کا شکار کر نیوالوں کو کامیاب نہیں ہونے دیں گے اْنہوں نے کہا کہ تحر یک انصاف کا ا ایجنڈا سیاسی مفاد نہیں بلکہ پاکستان کو فلاحی ریاست بنانا ہے چوہدری محمدسرور نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کی قیادت میں حکومت نے بر وقت اپنی کامیاب حکمت عملی سے پاکستان کومعاشی طور پر دیوالیہ ہونے سے بچایا ہے تمام اداروں سمیت ہر سطح پر شفافیات او ر میرٹ کو یقینی بنایا جارہا ہے۔گورنر پنجاب نے کہا کہ یہ پہلی حکومت ہے جو اداروں میں اصلاحات کے لیے کام کر رہی ہے  چوہدری محمدسرور نے مزید کہا کہ کورونا کا پھیلا ؤ روکنے کیلئے حکومت کی سمارٹ لاک ڈاؤن حکمت عملی کامیاب رہی ہے اور پاکستان میں ہر گزرتے دن کیساتھ کورونا کے مر یضوں کی تعداد اور ہلاکتوں میں کمی ہو رہی ہے مگر اس باوجود بھی کورونا کے مکمل خاتمے تک عوام ماسک اور دیگر حفاظتی اقدامات کو یقینی بنائے اور محرم الحرام میں بھی کورونا ایس او پیز پر سختی سے عمل کر نے کی ضرورت ہے صوبائی وزراء  نے ملاقات کے دوران کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کے ویژن کے مطابق ہم عوامی کی تر قی اور فلاح وبہبود کیلئے کام کر رہے ہیں  صوبے میں اَمن وامان یقینی بنانے سمیت عوام کو تمام بنیادی سہولتوں کی فراہمی بھی یقینی بنانے کیلئے تمام وسائل بیروکار لائے جائیں گے اور عوام کو کسی صورت تنہا نہیں چھوڑا جائیگا۔

گورنر پنجاب 

مزید :

صفحہ آخر -