ضلع کچہری،مال خانے سے ملحقہ کمر ے میں سونا، اطلاع پر انتظامیہ کی دوڑیں 

ضلع کچہری،مال خانے سے ملحقہ کمر ے میں سونا، اطلاع پر انتظامیہ کی دوڑیں 

  

ملتان (وقائع نگار)ضلع کچہری میں واقع مال خانے  سے ملحقہ کمرے  میں اربوں کا سونا ملنے کی اطلاع قیاس آرائیوں پر مبنی قراردیدیا گیا۔ ضلعی و عدلیہ انتظامیہ نے کمرے کو قفل شکنی تک سربمہر  کردیا۔ ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ کچہری میں مال خانہ کی عمارت کو مسمار کرکے چھ منزلہ جوڈیشنل کمپلیکس تعمیر کرنے کیلئے جب توڑ پھوڑ شروع کی گئی۔تو اچانک ایک(بقیہ نمبر39صفحہ6پر)

 تالہ لگا بند کمرہ نظر آیا۔مزدوروں نے بند کمرے میں انگریزوں کے وقتوں کا سونا موجود ہونے کی شور مچایا۔تو ڈپٹی کمشنر عامر خٹک۔ سی پی او و  عدلیہ سمیت  دیگر اہلکار و شہری بھی موقع پر پہنچ گئے۔جہنوں نے  کمرے کے بیرونی حصہ کا معائنہ کیا گیا۔اور آپس میں بند کمرے کو کھولنے کیلئے صلاح مشورے کیئے۔اور کسی نے  فی الحال کمرہ کھولنے کی کوشش نہ کی۔ ڈپٹی کمشنر نے کمرے کی حفاظت کیلئے پولیس۔سول ڈیفنس و ضلعی ملازمین کو مامور کردیا۔تاکہ کوئی چیز ادھر اودھر نا ہوسکے۔ ڈیوٹی پر موجود پولیس ملازمین کے مطابق  ضلعی انتظامیہ و عدلیہ نے مشترکہ طور  کمرے کو سیل کردیا ہے۔اور  لاہور سے ٹیم آنے کا انتظار کیا جارہا ہے۔جس کے آنے پر بند کمرے کی قفل شکنی کی جائے گی۔ذرائع کے مطابق کمرہ کا تالہ توڑنے وقت سنار کو موقع پر موجود رکھا جانے بارے غور کیا جارہا ہے۔ تاہم مال خانہ سے ملحقہ بند کمرے سے  سونا وغیرہ  نکلا کی اطلاع کو قیاس آرائی قرار دی گئی ہے۔کیونکہ بند کمرہ کھلنے کے بعد اصل حقائق کا پتہ چلے گا۔کہ کمرے کے اندر سونا ہے۔یا اسلحہ و ضروری دستاویزات ہیں۔تاہم کسی مصدقہ ذرائع نے سونا کی برآمدگی کے حوالے سے گزشتہ روز تک  تصدیق نہیں کی ہے ضلع  کچہری و شہر بھر میں  سونا ملنے کی چہ مگوئیاں اپنے عروج پر تھیں۔بتایا جارہا ہے یہ عمارت ڈیڑھ سو سال پرانی ہے۔گزشتہ روز ججز نے بھی مسمار ہونے والے مال خانہ اور بند کمرے کو چیک کیا ہے۔

دوڑیں 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -