پاکستان اسلام کا مضبوط قلعہ ہے،مفتی غلام فرید

  پاکستان اسلام کا مضبوط قلعہ ہے،مفتی غلام فرید

  

پشاور(سٹی رپورٹر)متحدہ علماء کونسل کے زیر پشاور پریس کلب میں تحفط بنیاد اسلام کی منظوری کیلئے اقدامات اٹھانے  کے حوالے سے کانفرنس کا انعقاد کیا گیا جسمیں تمام مکاتب فکر،سیاسی و مذہبی جماعتوں کے سربراہان نے شرکت کی۔کانفرنس میں مفتی غلا فرید حقانی صدر علماء کونس پشاور،صدر اہلسنت و الجماعت پشاور  مفتی نجیب اللہ فاروقی،مفتی عرفان اللہ عثمانی صدر سنی کونسل،عمبر عبدالعزیز نائب مرکزی جمعیت اہلحدیث پشاور نے دیگر علماء کرام کے ہمراہ خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے خلاف دشمن قواتیں سفحہ ہستی سے متانے پر تلے ہوئے ہے کیونکہ پاکستان اسلام کا ایک مظبوط قلعہ ہے  جبکہ پاکستان کا استحکام پاک فوج کی مسلسل قربانیوں کے مرہون منت ہیں،دشمنان پاکستان  ملکی میں مذہبی منافرت پھیلانے کی بھرپور کوشش کررتے ہے تاہم ایک پر امن معاشرے کے قیام کیلئے اور ملک کی سلامتی کیلئے فرقہ واریت کا خاتمہ ضروری ہے اسی لئے تمام مکاتب فکر کے علماء کو مذہبی منافرت پھیلانے والوں کا خاتمہ کیلئے ایک ہونا ہوگا اور پاکستان فوج کے شانہ بشانہ کھڑے ہو کر ملک کی حفاظت اندرونی اور بیراونی محاز پر کرنا ہوگا جسکے لئے تحفظ بنیاد اسلام بل کے سامنے لے ائے تاکہ اس بل کو قانونی حثییت دے تو فرقہ وارییت کا خاتمہ گا اور تمام مسالک کے مسلمان اجتماعی طور پر اندرونی خلفشار سے بے نیاز ہو کر بیرونی دشمن کیلئے ایک صف میں کھڑے ہو کر فوج کے ہمراہ پاکستان کی دفاع کرینگے۔شرکاء نے مطالبہ کیا کہ پاکستان کے وسیع تر مفاد کیلئے تحفظ بنیاد اسلام بل کو منظور کرنے کیلئے فوری اقدامات اٹھائے جائے جبکہ عوام اس ھوالے سے علماء کا بھرپور ساتھ دے جبکہ مذہبی جماعتیں اور اہل تشیح  متحدہ علماء کونسل کے ساتھ دینے سمیت عدالت  فیصل غازی خالد کا فیصلہ شرعی عدلت میں کیا جائے،شرعی فیصلہ کیلئے علماء کی کونسل تشکیل دی جائے جبکہ تمام خلفائے راشدین کے ایام شہادت پر عام تعطیل کا اعلان کر کے اس ایام کو سرکاری سطح پر منانے کا اعلان کیا جائے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -