ناقص اور ملاوٹ شدہ دودھ دہی کے خلاف ضلعی انتظامیہ چارسدہ کی کارروائی 

ناقص اور ملاوٹ شدہ دودھ دہی کے خلاف ضلعی انتظامیہ چارسدہ کی کارروائی 

  

چارسدہ(بیورورپورٹ) مضرِصحت، ناقص اور ملاوٹ شدہ دودھ دہی کے خلاف ضلعی انتظامیہ چارسدہ کی طویل کاروائی۔ سینکڑوں مضر صحت دودھ کو تلف کیا گیا جبکہ ایک درجن سے زائد دکانوں کو سیل کرکے مالکان پر بھاری جرمانے عائد کئے گئے۔تفصیلات کے مطابق ڈپٹی کمشنر چارسدہ جناب عدیل شاہ کی خصوصی ہدایت پراسسٹنٹ کمشنر  عدنان جمیل کی سربراہی میں فوڈ سیفٹی اینڈ حلال فوڈ اتھارٹی, محکمہ خوراک، محکمہ صحت اور محکمہ لائیو سٹاک کے اہلکاروں سمیت اسسٹنٹ کمشنرز (UT) ڈاکٹر صادق علی،خولہ حقدار،محمد فیاض، محمد ادریس اور سید ارسلان کا مضر صحت اور ملاوٹ شدہ دودھ دہی فروشوں کے خلاف مشترکہ آپریشن کیا۔کاروائی کے دوران دودھ ٹیسٹنگ لیب نے تنگی روڈ، تحصیل چوک، رجڑ بازار، نوشہرہ روڈ، غنی خان روڈ اور مردان روڈ پر واقع دودھ دہی فروشوں کی دوکانوں کے متعدد نمونوں کو غیر میعاری اور مضر صحت قرار دیا۔جس پر اسسٹنٹ کمشنر جناب عدنان جمیل نے 500 لیٹر غیر معیاری دودھ کو تلف کر کے ضائع کردیا گیا جبکہ ایک درجن سے زائد مضرصحت دودھ دہی فروشوں کی دوکانوں کو سیل کیا اور دوکان مالکان پر بھاری جرمانے بھی عائدکیں۔اس موقع پر اسسٹنٹ کمشنر جناب عدنان جمیل صاحب کا کہنا تھا کہ صحت عامہ کے دشمنوں کو کسی بھی سطح پر کام کرنے کی ہرگز اجازت نہیں دی جائے گی۔ملاوٹ کی روک تھام کے لئے ضلعی انتظامیہ چارسدہ سرگرم عمل ہے جب کہ ملاوٹ شدہ اور ناقص اشیاء خوردنوش کے بجائے  عوام کو خورد و نوش کی صاف اور معیاری اشیاء کی فراہمی کیلئے ہر ممکن اقدامات کئے جا ئینگے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -