نئی انسداد دہشت گردی فورس پولیس کے ماتحت ہی ہوگی :وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف

نئی انسداد دہشت گردی فورس پولیس کے ماتحت ہی ہوگی :وزیراعلیٰ پنجاب محمد ...
نئی انسداد دہشت گردی فورس پولیس کے ماتحت ہی ہوگی :وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف

  

 لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) وزیراعلیٰ پنجاب میاں محمد شہبازشریف نے کہا ہے کہ نئی انسداد دہشت گردی فورس پولیس کے ماتحت ہی ہوگی اور اس حوالے سے کوئی دو رائے نہیں۔دنیا نیوز کے مطابق سینئر پولیس افسران نے وزیراعلیٰ پنجاب کے اعلان کاخیرمقدم کیا ہے۔

پولیس افسروں اور پنجاب حکومت کے درمیان انسداد دہشت گردی فورس کے اختیارات کا تنازع شدت اختیار کر گیاتھا اور پولیس افسروں نے مطالبات تسلیم کرنے کیلئے پنجاب حکومت کو دو روز کی مہلت دیتے ہوئے ایک دن کیلئے غیر اعلانیہ چھٹی پر جانے کا فیصلہ بھی کیا تھا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق پنجا ب حکومت نے یہ فیصلہ کیا تھا کہ وزیراعلیٰ پنجاب صرف آئی جی کی جانب سے پیش کردہ مطالبات یا تحفظات پر غور کریں گے اور کسی بھی پولیس افسروں کے گروپ کے ساتھ نہ تو رابطہ ہو گا اور نہ ہی ان کے مطالبات یا تحفظات کو اہمیت دی جائے گی ،یہ بات بھی زیر غور تھی کہ پولیس کی بجائے نئی انسداد دہشت گردی ہوم سیکرٹری یا وزیر داخلہ (وزیراعلیٰ ) کے ماتحت ہوگی، پولیس افسروں پر اعتماد کرنے کی بجائے فوج کے ریٹائرڈ کیپٹن سے بریگیڈئیر تک 200 افسروں کو بطور کمانڈر بھرتی کیا جا ئے گا،اس حکومتی منصوبے پر پولیس سروس کے افسروں کو تحفظات ہیں۔ بعض افسروں کی جانب سے اجتماعی استعفوں کی تجویز بھی پیش کی گئی تھی مگر اسے پذیرائی نہیں مل سکی اور پہلے مرحلے میں کام چھوڑ کر چھٹی اور دوسرے مرحلے میںعملی احتجاج کا فیصلہ ہوا تاہم اس کو وزیراعلیٰ پنجاب کے ردعمل سے مشروط کر دیا گیا تھا۔گزشتہ روز بھی پنجاب کے سو سے زائد اے ایس پی سے لے کر ڈی آئی جی عہدہ تک کے افسروں نے ٹیلی کانفرنس کی طرز پر اجلاس کئے جن میں طے پایا کہ پولیس کے اختیارات کم کرنے کی تجویز پر ردعمل مزید سخت کیا جائے گا کسی صورت بھی ریٹائرڈ فوجی افسروں کو پولیس افسروں پر ترجیح دینے کی اجازت ہیں دی جائے گی۔ اگر حکومت نے دو دن کے اندر مثبت جواب نہ دیا تو ایک دن کی غیر اعلامیہ چھٹی کی جائے گی اور افسر کام نہیں کریں گے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ ایک سینئر پولیس آفیسر کی تجویز تھی کہ اگر چیف جسٹس اور اعلیٰ عدلیہ کے ججز اپنے ادارے کے تقدس کے لئے سڑکوں پر آ سکتے ہیں تو محکمہ پولیس کے وقار اور شہداءکی قربانیوں کیلئے ہر اقدام کیا جا سکتا ہے۔

مزید :

لاہور -اہم خبریں -