گورنر بلوچستان پر حملے کی کوشش ناکام ، 2دہشت گرد گرفتار ، خودکش گولہ بارود برآمد

گورنر بلوچستان پر حملے کی کوشش ناکام ، 2دہشت گرد گرفتار ، خودکش گولہ بارود ...

  

کوئٹہ (مانیٹرنگ ڈیسک،آئی این پی )سیکیورٹی فورسز نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے گورنر بلوچستان محمد خان اچکزئی پر حملے کی کوشش ناکام بنا دی۔ڈی آئی جی کوئٹہ عبدالرزاق چیمہ کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیر داخلہ بلوچستان سرفراز بگٹی نے بتایا کہ سیکیورٹی اداروں نے خفیہ اطلاع پر قلعہ عبداللہ میں کارروائی کی اور گورنر بلوچستان پر حملے کی کوشش ناکام بنادی۔سرفراز بگٹی نے بتایا کہ گلستان کے علاقے سے 2 دہشت گردوں حامدبشیر اور منور کو گرفتار کرلیا گیا، جن کے قبضے سے خودکش جیکٹس اور گولہ بارود بھی برآمد ہوا۔صوبائی وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ گرفتار دہشت گردوں کا تعلق اسی گروپ سے ہے، جس نے اگست 2015 میں پنجاب کے وزیر داخلہ شجاع خانزادہ کو خودکش حملے میں نشانہ بنایا تھا۔سرفراز بگٹی کے مطابق شجاع خانزادہ کو نشانہ بنانے والے گروپ نے ہی افغانستان میں بیٹھ کر گورنر بلوچستان کو ٹارگٹ کرنے کی منصوبہ بندی کی، جسے ناکام بنا دیا گیا۔انہوں نے مزید بتایا کہ نادرا سے کوئٹہ چرچ حملہ آوروں کی تصدیق نہیں ہوسکی، جس کا مطلب ہے کہ حملہ آور غیر ملکی تھے۔اس موقع پر ڈی آئی جی کوئٹہ عبدالرزاق چیمہ نے میڈیا کو بتایا کہ گذشتہ روز صوبے کے چرچ نمائندگان سے میٹنگ کرکے انہیں سیکیورٹی فراہم کرنے کی یقین دہانی کروائی گئی ہے۔ڈی آئی جی کوئٹہ کا کہنا تھا کہ سیکیورٹی کے پیش نظر یکم جنوری تک مسیحی برادری کی تقریبات صرف چار دن ہوں گی اور اس دوران مرکزی گیٹ بند رہیں گے۔علاوہ ازیں وزیر داخلہ بلوچستان سرفراز بگٹی نے کہا ہے کہ گرفتار مجرم دہشت گردی کی وارداتوں میں ملوث تھے‘ پولیس فورسز کی سکیورٹی کے لئے ہر ممکن انتظامات کئے ہیں‘ چرچ پر حملہ کرنے والوں تک بھی جلد پہنچ جائیں گے۔ پولیس فورسز کی سکیورٹی کیلئے ہر ممکن انتظامات کئے ہیں پولیس فورسز کو بلٹ پروف گاڑیاں فراہم کررہے ہیں۔

گورنر پر حملہ

مزید :

صفحہ اول -