سیاستدانوں کی آپس میں لڑائی سے اسٹیبلشمنٹ کیلئے مواقو پیدا ہوتے ہیں: سراج الحق

سیاستدانوں کی آپس میں لڑائی سے اسٹیبلشمنٹ کیلئے مواقو پیدا ہوتے ہیں: سراج ...

  

اسلام آباد (آئی این پی) امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ جب بھی سیاستدان آپس میں لڑتے ہیں تو اسٹیبلشمنٹ کیلئے مواقع پیدا ہوتے ہیں، وزیراعظم نے اب تک کوئی ویژن نہیں دیا ہے، انہیں ابھی تک یقین نہیں آرہا کہ وہ وزیراعظم ہیں،2017بھی 2016کی طرح ناکام معاشی منصوبے کے ساتھ گزررہا ہے، ملک میں پہلے چار سال وزیرخارجہ نہیں تھا اب وزیرخزانہ نہیں ہے، فل ٹائم وزیرخزانہ ہونا چاہیے۔ بدھ کو پارلیمنٹ ہاؤس کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ وزیراعظم نے اب تک کوئی ویژن نہیں دیا، انہیں ابھی تک یقین نہیں آرہا کہ وہ وزیراعظم ہیں، جب بھی سیاستدان آپس میں لڑتے ہیں تو اسٹیبلشمنٹ کیلئے مواقع پیدا ہوتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں پہلے چار سال وزیرخارجہ نہیں تھا اور اب وزیر خزانہ نہیں ہے، اسحاق ڈار کے دور میں سب سے زیادہ قرضے لئے گئے جن کی ماضی میں کوئی مثال نہیں ملتی، معیشت ترقی نہیں کر سکتی، قرضوں کا بوجھ عوام پر نہ ڈالا جائے،فل ٹائم وزیرخزانہ ہونا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ بھی 2016کی طرح ناکام معاشی منصوبے کے ساتھ گزررہا ہے،وی آئی پی طبقے نے تو ترقی کی لیکن عام آدمی نے کوئی ترقی نہیں کی، قوت خرید میں کمی ہوئی ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -