چکوال،پی پی9کا ضمنی الیکشن کانٹے دارمقابلے کی شکل اختیارکرگیا

چکوال،پی پی9کا ضمنی الیکشن کانٹے دارمقابلے کی شکل اختیارکرگیا

  

چکوال(ڈسٹرکٹ رپورٹر)ملکی سطح پر غیر یقینی سیاسی صورتحال کے خاتمے کے بعد 9جنوری کو پی پی20کا ضمنی الیکشن ایک انتہائی دلچسپ اور کانٹے دار مقابلے کی شکل اختیار کر گیا ہے۔ پاکستان تحریک انصاف کے سرگرم کارکن اور نوجوان ایک بڑا اپ سیٹ کرنے کیلئے پرعزم ہیں جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن اس حلقے کی ماضی کی انتخابی تاریخ کا شاندار الفاظ میں دوہرانے کیلئے تیار ہے۔ حلقہ پی پی20میں گزشتہ آٹھ انتخابات میں سات مسلم لیگ ن نے جیتے ہیں اور اس حلقے میں مرحوم چوہدری لیاقت علی خان ایم پی اے کی اجارہ داری مکمل طور پر ہر دور میں قائم رہی ، صرف ایک بار 2002کے الیکشن میں ان کی اہلیہ بیگم عفت لیاقت کو مسلم لیگ ق کے چوہدری اعجاز فرحت کے ہاتھوں شکست ہوئی۔ ماضی میں پاکستان پیپلز پارٹی نے ہمیشہ مسلم لیگ ن کا مقابلہ کیا مگر کامیابی اس کے مقدر میں نہیں آئی۔ پاکستان تحریک انصاف نے 2013کا الیکشن اس نشست پر لڑا تھا اور پاکستان تحریک انصاف کے علی ناصر بھٹی نے 32ہزار ووٹ لیکر سب کو حیران کر دیا تھا۔ بہرحال اب مقابلہ پی ٹی آئی کے راجہ طارق افضل کالس اور مرحوم ایم پی اے چوہدری لیاقت علی خان کے صاحبزادے چوہدری حیدرسلطان کے درمیان ہے۔ راجہ طارق افضل کالس نے بڑی تھوڑی مدت میں ناصر ف اپنی سیاسی شناخت بنائی بلکہ اب وہ ایک مضبوط امیدوار کی شکل میں میدان میں ہیں او رانہوں نے مسلم لیگ ن کی مقامی قیادت کو وختہ ڈال دیا ہے۔ پی ٹی آئی نے راجہ طارق افضل کالس جو کہ ابتداء میں غیر معروف امیدوار تصور کیے جا رہے مگر اب ان کی سرداران چکوال کیساتھ رشتہ داری کا جادو سر چڑھ کر بولنے لگا ہے۔ سردار گروپ کے متعدد اہم سیاسی لوگ راجہ طارق افضل کالس کے ووٹ مانگ رہ ہیں ، پیپلز پارٹی کی ساری مقامی قیادت انہوں نے اپنے حق میں استعمال کرنا شروع کر دی ہے اور بے شک راجہ طارق افضل کالس ہر آنے والے دن کیساتھ بھرپور طریقے سے سامنے آرہے ہیں۔ چوہدری حیدر سلطان جو کہ خود نوجوان ہیں اور نوجوانوں کی ایک بڑی تعداد اس وقت چکوال شہر میں سرگرم عمل ہے ، چکوال شہرمیں ہمیشہ مسلم لیگ ن کی مضبوط پوزیشن رہی ہے۔ 2015کے بلدیاتی انتخابات میں چوہدری حیدر سلطان نے تن تنہا 37وارڈز میں سے20میں نمایاں کامیابی حاصل کی اورچکوال شہر میں پہلی مرتب وہ ایک مضبوط گروپ کو لیکر آگے بڑھ رہے ہیں۔ تحریک لبیک یا رسول اللہ کے ناصر منہاس ایڈووکیٹ بھی میدان میں ہیں مگر وہ ابھی تک کوئی موثر طریقے سے اپنا انتخابی کردار سامنے نہیں لا سکے ہیں۔ البتہ سیاسی حلقوں کا خیال ہے کہ مذہبی ووٹ بہرحال انہیں پڑے گا۔ جس کا تمام تر فائدہ پی ٹی آئی کے راجہ طارق افضل کالس کو ہوگا۔9جنوری کے ضمنی الیکشن کیلئے میدان لگ چکا ہے اور انتخابی مہم میں دن بدن تیزی آرہی ہے۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -