کتوں کی وفاداری مشہور ہے لیکن ان کتوں نے اپنی ہی مالکن کو کھالیا، وجہ کیا بنی؟ جانئے

کتوں کی وفاداری مشہور ہے لیکن ان کتوں نے اپنی ہی مالکن کو کھالیا، وجہ کیا ...
کتوں کی وفاداری مشہور ہے لیکن ان کتوں نے اپنی ہی مالکن کو کھالیا، وجہ کیا بنی؟ جانئے

  

واشنگٹن(نیوز ڈیسک)کتے کو انتہائی وفادار اور انسان دوست جانور سمجھا جاتا ہے اور مغربی ممالک میں تو اسے پالتو جانور کے طور پر اسے بہت ہی پسند کیا جاتا ہے، مگر امریکہ میں گزشتہ ہفتے ایک ایسا بھیانک واقعہ پیش آگیا کہ لوگ کتے کے نام سے ہی ڈرنے لگے ہیں۔

میل آن لائن کے مطابق ریاست ورجینیا سے تعلق رکھنے والی لڑکی بیتھنی سٹیفنز نے ٹونکا اور پیکمن نامی دو کتے پال رکھے تھے جنہیں وہ بہت محبت اور پیار سے رکھتی تھی۔ دو ماہ قبل جب بیتھنی کی طلاق ہوئی تو وہ بے حد پریشان اور غمزدہ رہنے لگی اور ایسے میں کتوں کی دیکھ بھال اس کے لئے مشکل ہوگئی۔ وہ دونوں کتوں کو اپنے والد کے پاس چھوڑ آئی۔

بیتھنی کے معمر والد نے کتوں کو اپنے گھر میں رکھنے کی اجازت تو دے دی لیکن وہ ان کی مناسب دیکھ بھال کرنے سے قاصر تھے۔ گھر میں مسلسل بند رہنے سے کتوں کا مزاج خطرناک ہونے لگا تھا۔ اگرچہ بیتھنی جب کبھی والد کے گھر جاتی تو انہیں باہر لیجاتی تھی لیکن وہ دن بدن زیادہ مشتعل ہوتے جارہے تھے۔

گزشتہ جمعہ کے روز بھی بیتھنی اپنے کتوں کو لے کر باہر گئی لیکن ایک ایسا لرزہ خیز واقعہ پیش آگیا کہ پورا علاقہ خوف و ہراس میں ڈوب گیا ہے۔ بیتھنی کو معلوم نہیں تھا کہ اس کے کتے نہ صرف خونخوار ہوچکے تھے بلکہ شدید بھوکے بھی تھے۔ جب وہ انہیں جنگل میں گھما پھرارہی تھی تو کتوں نے اسی پر حملہ کردیا اور اس کا گوشت نوچ نوچ کر کھانے لگے۔

مقامی پولیس کا کہنا ہے کہ جب وہ جائے وقوعہ پر پہنچے تو کتے بیتھنی کے جسم کا زیادہ تر حصہ کھاچکے تھے۔ پولیس کے پہنچنے سے پہلے ہی اس کی موت واقع ہوچکی تھی ۔ لاش کو پوسٹ مارٹم کے لئے بھجوایا گیا اور اس بات کی تصدیق ہوگئی کہ اس کی ہلاکت کتوں کے کاٹنے کی وجہ سے ہی ہوئی تھی۔

دوسری جانب مقامی لوگ اس بات پر یقین نہیں کرپارہے۔ بیتھنی کی دوست باربرا نورس کا کہنا تھا ”وہ کتے اس سے بہت ہی پیار کرتے تھے۔ میں یہ بات ماننے کو تیار نہیں ہوں کہ بیتھنی کو اس کے کتوں نے مارا ہے۔ مجھے تو لگتا ہے کہ بیتھنی کی موت کی وجہ کچھ اور ہے اور شاید کتے اس کی مدد کو پہنچے ہوں گے۔“

لائیو ٹی وی پروگرامز، اپنی پسند کے ٹی وی چینل کی نشریات ابھی لائیو دیکھنے کے لیے یہاں کلک کریں

مزید :

ڈیلی بائیٹس -