بھارت ہمیں ختم کرنے تک نہیں رکے گا، کشمیری اٹھ کھڑے ہوں، محبوبہ مفتی 

بھارت ہمیں ختم کرنے تک نہیں رکے گا، کشمیری اٹھ کھڑے ہوں، محبوبہ مفتی 

  

سرینگر (این این آئی) غیر قانونی طور پر بھارت کے زیر قبضہ جموں و کشمیر میں پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی) کی صدر محبوبہ مفتی نے کشمیریوں سے اپنے چھینے گئے حقوق کیلئے اٹھ کھڑے ہونے کی اپیل کر تے ہوئے کہاہے دفعہ370 کی منسوخی کے بعد علاقے کی صورتحال بد سے بدتر ہوگئی ہے۔کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق ضلع پونچھ میں ایک پارٹی کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے محبوبہ مفتی نے دفعہ370 کو منسوخ کرنے کے بھارتی حکومت کے فیصلے کو غلط، غیر آئینی اور غیر جمہوری قرار دیتے ہوئے کہا بھارت نے جموں و کشمیر کے لوگوں کے وقار اور عزت سے کھیلاہے۔ موجودہ حالات کے پیش نظر سب سے بڑی ذمہ داری نوجوانوں پر عائد ہوتی ہے۔ دفعہ 370 کی منسوخی کے بعد حالات مزید خراب ہوئے ہیں اوربھارت ہم سے نہ صرف ہماری زمین اور نوکریاں چھین رہاہے بلکہ اس نے ہماری عزت اور وقار سے بھی کھلواڑ کیا ہے، وہ اس وقت تک نہیں رکے گا جب تک وہ ہمارے وجود کو ختم نہیں کر دیتا۔ اگر لوگ جموں و کشمیر کو زندہ رکھنا چاہتے ہیں تو ان کے سامنے واحد راستہ یہ ہے وہ عزم اور اتحاد کے ساتھ اپنے چھینے گئے حقوق کیلئے اٹھ کھڑے ہوں ورنہ بھارت ہم سے سب کچھ لوٹ کر لے جائے گا۔ 5 اگست 2019 کو ہماری جدوجہد شروع ہوئی ہے۔ ہمیں اس جدوجہد کو پرامن طریقے سے منطقی انجام تک پہنچانے کیلئے آپ کی حمایت کی ضرورت ہے۔ جموں و کشمیر کے نوجوانوں کو مایوسی کی طرف دھکیلا جارہا ہے تاکہ وہ منشیات کی طرف راغب ہوکریا بندوق اٹھا کر اپنی زندگیاں تباہ کر سکیں۔بھارتی حکمران پہلے ہی ہندوؤں کو الگ کر چکے ہیں اور دلتوں کو قتل کر رہے ہیں۔ اب وہ مسلمان ووٹوں کو مختلف ناموں، پارٹیوں اور فرقوں کی بنیاد پر تقسیم کرنا چاہتے ہیں۔ وہ پہلے ہی کئی پارٹیاں بنا چکے ہیں اور ان کا مقصد صرف اسمبلی میں اکثریت حاصل کرنا ہے تاکہ وہ 5 اگست 2019 کے فیصلے کا جواز پیش کر سکیں۔انہوں نے کہا کہ وہ بھارتی سپریم کورٹ میں 5 اگست کے اقدامات کے خلاف ہمارے کیس کو کمزور کرنا چاہتے ہیں۔

مھبوبہ مفتی

مزید :

صفحہ آخر -