پاکستان 2 قومی نظریہ کے تحت معرض وجود میں آیا،اے ڈی سی

پاکستان 2 قومی نظریہ کے تحت معرض وجود میں آیا،اے ڈی سی

  

پشاور(سٹاف رپورٹر)ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ایبٹ آباد شہا ب محمد خا ن نے کہا ہے کہ ہمارا ملک پا کستان دو قومی نظریہ کے تحت قا ئم ہوا مسلما نو ں کے لئے الگ، ہندو ں کے لئے الگ خطہ جس کی بدو لت آج یہا ں تما م مذاہب کے لو گ آزادی سے اپنی زندگی بسر کر رہے ہیں اور تما م مذاہب کے لو گ اپنی اآزادی سے زندگیاں گزاررہے ہیں اسی طرح جب پا کستان کا پرچم تشکیل دیا گیا اس میں بھی دو حصے ہیں بڑا حصہ مسلم اور چھو ٹا حصہ دیگر مذاہب کو ظاہر کر تا ھے۔ان خیال کا اظہار انہوں نے ہو ٹل ون ایبٹ آباد میں پیر کے روز ضلعی انتظا میہ ایبٹ آباد کے زیر اہتمام ہزارہ  میں کرسمس کے موقع پر بین المذاہب ہم آہنگی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیاکا نفرس سے ڈسٹر کٹ خطیب ایبٹ آباد مفتی عبد الوجد،ذاکر پال،سید وقار حسین شاہ،مفتی اظہر محمود ہزاروی،پیٹر نورزگل،مولانا عبدالوحید،فادر ناصر ویلیم،حضرت عضمت حسین شا ہ اور دیگر نے کا نفرس سے خطا ب کیا۔بین المزا ہب کا نفرس میں ہزارہ  ڈویژن کے مختلف مکا تب فکر کے علمائے کرام، اسسٹنٹ کمشنر ایبٹ آباد محمد احسا ن احسن،ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر امین الحسن،ضلعی افسران،مختلف سکولوں کے بچوں اور دیگر لو گوں نے شرکت کی۔کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے دیگر مزاہب کے مقررین نے کہا کہ جب ہندوستان کی تقسیم ہو ئی اس وقت ہمیں ملک پاکستان اور اسلام میں زیادہ تحفظ محسوس ہوا جس کی بدولت ہم یہاں آگئے۔انہوں نے کہا کہ ہم سب نے اپنے معاشرے میں عدم برداشت کو ختم کر نا ہے چا ئیں ہم تما م مزاہب کے لوگوں کو پیغام دیتے ہیں پا کستان تمام مذاہب اور اقوام کا ملک ہے ہم اس ملک کی بقاء اور سلامتی کے لئے ہر وقت قربانی دینے کے لئے تیار ہیں۔ہم سب نے ایک دوسرے کے مزہب کا احترا م کر نا ہے۔ مقررین نے کہا کہ اگر ہم اس ملک کی ترقی خوشحا لی،امن اما ن چا ہیتے ہیں  جو کچھ آج اس کا نفرس میں کہہ رہے ہیں اس پر عملی طور پر ہم سب مذاہب نے عملی طور پر بھی عمل کر نا ہے جس سے لئے ہم سب مزاہب میں اتحاد اتفاق،ایک دوسرے کوبرداشت اور بھا ئی چا رہ قا ئم کر نا ہے تب جا کر اس ملک میں استحکا م،امن امان،سلامتی اور خوشحا لی آئے گی۔کا نفرس کے شر کا ء نے کہا کہ ہم سب اپنے اپنے مزاہب کے سفیر ہیں جہا ں جہاں بھی آپ جا ئیں امن کا پیغام پہنچا ئیں۔مقررین نے کہا کہ ہم ضلعی انتظا میہ ایبٹ آباد کے شکر گزار ہیں جنہو ں  نے اس کا نفرس کا انعقاد کیا  اور سب مذاہب کے لو گو ں کو ایک سا تھ ملنے کا موقع ملا۔انہو ں نے کہا کہ اس طر ح کی کا نفرنسز ہر تین ما ہ منعقد ہو نی چا ئیں تا کہ ہم سب میں ایک دوسرے کے لئے احترا م،پیار محبت اور بردا شت پیدا ہو۔انہو ں نے کہا کہ جس طر ح اس ملک کے بنا نیں میں سب مزاہب کے لو گ اکٹھے تھیاس وقت بھی اس ملک کو تما م مزاہب کے اکھٹے ہو نی کی اشد ضرو رت ہے۔انہو ں نے کہا آج تما م علما ء جو کسی بھی مزہب سے تعلق رکھتے ہیں وہ اپنے اپنے ممبر،اما م با ر گا ہو ں،چر چ اور دیگر عبادت گاہوں میں اخو ت،بھا ئی چا رہ اور ایک دوسرے کو بردا شت کا درس دیں جس کی بدو لت اس ملک میں امن قا ئم ہو گا۔ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ایبٹ آباد نے مزید کہا کہ میں اس کا نفرس میں شریک تما م مذاہب کے لو گو ں کو خوش آمدید کہتا ہو ں اس کا نفرس میں تما م مذاہب کے مقررین نے مزاہب،اخلا ق اور بردا شت کا درس دیا۔انہو ں نے کہا ہم سب میں مشتر کہ قدر انسا نیت ہے ہم سب نے ایک دوسرے کاخیا ل اور احترا م کر نا سیکھنا ہے ایک دوسرے کو برداشت کر نے کا درس دینا ہے۔انہو ں نے کہا کہ ایسی کا نفرس کے انعقاد کا مقصد با ت چیت کے ذریعے مسا ئل کو حل کرنا  ہے۔انہو ں نے کہا کہ انشا اللہ ہر تین ما ہ میں اس طرح کی کا نفرس ضرور منعقد ہو نگی۔آخر میں انہو ں نے سکو ل کے بچو ں اور شر کا ء میں شیلڈ تقسیم کیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -