ڈبلیو ڈبلیو ایف پاکستان کا وہیل مچھلی کے مشاہدے کیلئے سفر کا آغاز

ڈبلیو ڈبلیو ایف پاکستان کا وہیل مچھلی کے مشاہدے کیلئے سفر کا آغاز

لاہور(خبر نگار)ڈبلیو ڈبلیو ایف پاکستان نے سمندر میں موجود مختلف اقسام کی وہیل مچھلی کے مشاہدے کیلئے ایک سفر کا آغاز کیا جو 13دسمبر سے دبئی سے شروع ہو کر 25دسمبر کو کراچی میں اختتام پذیر ہو گا۔ اس سفر کا مقصد سمندر میں موجود مختلف اقسام کی مچھلیوں کا مشاہدہ کرنا ہے اور جس سے بعد ازاں ان کو بچانے میں مدد مل سکے گی۔ ڈبلیو ڈبلیو ایف پاکستان کے صدر خالد محمود اس سفر کو لیڈ کر رہے ہیں اور ان کے ساتھ فرانسیسی اور اطالوی ساتھی بھی موجود ہیں۔ ڈبلیو ڈبلیو ایف پاکستان کے ٹیکنیکل ایڈوائزر آف مرین فشریز محمد معزم خان کا کہنا تھا کہ وہیل شارک کی بڑی تعداد پاکستان کی سمندری حدود میں پائی جاتی ہے جو اکثر اوقات ماہی گیروں کے جال میں پھنس کر مر جاتی ہے۔

، ڈبلیو ڈبلیو ایف پاکستان کی ٹریننگ کی بدولت مچھیرے اب وہیل شارک کو باآسانی سمندر میں آزاد کر دیتے ہیں۔ ایک اندازے کے مطابق پاکستان کی سمندری حدود میں 250سے 400 ہمپ بیک وہیل پائی جاتی ہے جو آئی یو سی این کے مطابق (خطرے) میں ہے۔ ڈبلیو ڈبلیو ایف پاکستان کے ریجنل ڈائریکٹر رب نواز کا کہنا تھا کہ اس کاوش سے ہمپ بیک وہیل کے حوالے سے کافی معلومات ملیں گی جس سے ان کو بچانے میں مدد ملے گی۔ ڈبلیو ڈبلیو ایف پاکستان ہمپ بیک وہیل کی معدوم ہوتی نسل کو بچانے میں کلیدی کردار ادا کر رہا ہے۔

مزید : کامرس