ہنگو، اورکزئی کے علی خیل قوم کا گرینڈ جرگہ میں اپنے علاقوں کو واپسی کا مطالبہ

ہنگو، اورکزئی کے علی خیل قوم کا گرینڈ جرگہ میں اپنے علاقوں کو واپسی کا ...

ہنگو(نمائندہ پاکستان )اورکزئی ایجنسی کے قوم علی خیل کا گرینڈ جرگہ اپنے علاقوں کو واپسی کا مطالبہ پارلمنٹ ہاوس کے سامنے دھرنا اور لانگ مارچ کی دھمکی ، اپر اورکزئی ایجنسی کے قبائیلی جرگہ مشران نے پی اے اورکزئی اور پیرا میلٹری فورسزز کے ہمراہ وزٹ کرنے کا مطالبہ کیا پولیٹیکل انتظامیہ کی جانب سے غلجو سے آگے جو علاقے کلیئر قرار ہوئے ہیں اُن علاقوں کو اپنے اپنے متعلقہ اقوام کی و اپسی یقینی بنایا جائیںاور تباہ ہونے والے گھروں کو تیس تیس لاکھ روپے کا معاوضہ فراہم کیا جائے،گورنر کے پی کے انجینئر شوکت اللہ اورکزئی ایجنسی کا دورہ کریں ہم بھر پور استقبال کرینگے اورکزئی ایجنسی کے تمام قبیلوں کا مطالبہ جرگہ مشران مرکزی حکومت ،گورنر اور اعلی حکام سے پرزور مطالبہ کیا کہ اگر ہمارے مطالبات تسلیم نہ کی گئے تو ہم پارلمنٹ ہاوس کے سامنے تمام قبائیلی ایجنسیاں کے عوام کے ہمراہ دھرنا دینگے ان خیالات کا اظہار جمعرات کے روز متحدہ قبائل پارٹی کے مرکزی وائس چیئر مین ملک حبیب نور کے زیر قیادت اورکزئی ایجنسی کے قبائل کا علی خیل اقوام پر مشتمل ایک گرینڈ جرگہ اورکزئی ایجنسی ہیڈ کوارٹر میں منعقد ہواجسمیں ا ورکزئی ایجنسی علی خیل قبائل کے مشران سمیت سینکڑوں کی تعداد میں قبائیلی عوام نے شرکت کی اس موقع پر متحدہ قبائیل پارٹی کے مرکزی وائس چیئر مین ملک حبیب نور اورکزئی نے جرگہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حکومت نے اورکزئی ایجنسی کے متاثرین کو خدا کی رحم و کرم پر چھوڈئے ہیں کوئی پرسان حال نہیں جرگہ میں کہاکہ ہم نے بار بار حکومت سے جرگوں کے ذریعے واپس جانے کا مطالبہ کرتے ہیں مگر اب تک حکومت خاطر خواہ اقدامات نہیں اُٹھائیں ،علی خیل قبیلوں کا مطالبہ کیا کہ گورنر کے پی کے انجینئر شوکت اللہ اورکزئی ایجنسی کا دورہ کریں ہم بھر پور استقبال کرینگے نہ ہمیں بنیادی سہولیات فراہم کرتے اور نہ ہی ہمیں واپس بھیج رہے ہیں اُنہو ں نے کہاکہ اورکزئی قبائیل نے ہمیشہ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کیلئے قربانیاں پیش کیا ہیںکہاکہ ا ورکزئی ایجنسی کے قوم علی خیل کا یہ اخری گرینڈ جرگہ ہیں جرگہ میں یہ فیصلہ کیا گیا کہ کلیئر تمام علاقوںکی متاثرین کی واپسی ، اپر اورکزئی ایجنسی کے قبائیلی جرگہ مشران نے پی اے اورکزئی اور پیرا میلٹری فورسزز کے ہمراہ وزٹ کرنے اورتباہ ہونے والے گھروں کی مرمت کیلئے حکومت تیس تیس لاکھ روپے کا معاوضہ فراہم کیا جائے اُنہوں نے مرکزی حکومت،گورنر کے پی کے،وزیر اعظم پاکستان،صدر مملکت اور اعلی حکام سے پرزور مطالبہ کیا کہ اپر اورکزئی ایجنسی کے قوم علی خیل کی کلیئر علاقوں کی واپسی اور واپسی پر فی گھرانے کیلئے تیس تیس لاکھ روپے فراہم کرنے کا مطالبہ بصورت دیگر تمام قبائیلی ایجنسیاں کے عوام ہمراہ پارلیمنٹ ہاوس کے سامنے دھرنا اور لانگ مارچ سے دریغ نہیں کرینگے۔

واپسی مطالبہ

مزید : صفحہ اول