شوبز راؤنڈاپ

شوبز راؤنڈاپ

  

اداکارہ ،ماڈل وپرفارمر ماہ نورنے کہاہے کہ پی ٹی وی کی ڈرامہ سیریل’’رسمیں‘‘کے بعد مزید ڈراموں میں کام کی پیشکش ہے۔میں صر ان ڈراموں میں کام کروں گی جن میں میرا رول پاور فل ہونے کے ساتھ ساتھ پرفارمنس سے بھرپور ہوگا۔ فلم میں کوئی برائی نہیں ہے اچھا کام ہوگا تو ضرورکروں گی ۔پاکستان میں خواتین کو ظلم برادشت کرنے کی عادت ہوچکی ہے بد قسمتی سے ہمارے ہاں جو حقوق مردوں کوحاصل ہیں عورتوں کو ان سے محروم رکھا جا تا ہے جبکہ اسلام نے عورت اور مرد کو برابرقرار دیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ تعلیم یافتہ اور باشعور عورت کو ہر جگہ جنس اور نسلی معیار کا نشانہ بنایا جاتا ہے جو سخت زیادتی کے مترادف ہے جبکہ دیگر ممالک میں عورتوں کو مردوں سے زیادہ حق دیا جاتا ہے جس سے وہاں کی عورتوں کے اعتماد میں اضافہ ہوتا ہے اور ہمارے ہاں عورت کی حوصلہ افزائی کی بجائے حوصلہ شکنی کی جاتی ہے ۔ماہ نورنے کہاکہ ہم سب کو اپنے رویے کو پر نظر ثانی کرنی چاہیے اور معاشرے میں پیار محبت اور بھائی چارے کو فروغ دینا چاہیے تاکہ کسی کی حق تلفی نہ ہو ۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ میں تعداد کی بجائے معیار کو ترجیح دیتی ہوں ۔ صرف اچھااور پرفارمنس والا کردار قبول کرتی ہوں اور دھڑ دھڑاڈرامے حاصل کرنے کے سخت خلاف ہوں۔ انہوں نے کہاکہ نئے فنکاروں کو ٹی وی کے اکیڈمی کی حیثیت رکھنے والے فنکاروں کے تجربات سے بھرپور استفادہ کرنا چاہیے تاکہ ان کے کام میں خوبصورت اور نکھار آسکیں ۔

ڈھول پلیئرو گلوکارہ ارشمہ کول کی طرف سے صحافیوں کے اعزاز میں عصرانہ

معروف ڈھول پلیئرو گلوکارہ ارشمہ کول کی طرف سے کلچرل جرنلسٹس فاؤنڈیشن آف پاکستان کے ممبران کے اعزاز میں عصرانہ دیا گیا۔گزشتہ روز مقامی ہوٹل میں ایک تقریب کا انعقاد ہوا جس میں شوبز صحافیوں کے علاوہ شوبز سے تعلق رکھنے والے افراد بھی شریک تھے ۔ارشمہ کول نے اس موقع پرکہا کہ اُن کی کمپنی’’ فیشن کروز ‘‘نے کم عرصہ میں ورلڈ میں اپنا نام بنالیا ہے میں نے اب تک درجنوں شوز کیے ہیں جبکہ فیشن شوز میں بھی ہم نے منفرد سٹائل متعارف کروایا ہے ۔ہماری محنت تو ہوتی ہے مگر اس کے ساتھ ساتھ میڈیا کی بے حد مشکور ہوں جنہوں نے ہمیشہ میرے مثبت تشہیر کی آج کے دور میں پرنٹ اور الیکٹرانک میڈیا کی اہمیت سے انکار نہیں کیا جاسکتا اور میں سمجھتی ہوں کہ یہ میرا فرض ہے کہ میں میڈیا کی عزت اور وقار کا خیال رکھوں میں کلچرل جرنلسٹس فاؤنڈیشن کے تمام ممبران کی بے حد مشکور ہوں جنہوں نے میری دعوت قبول کی اور مجھے عزت بخشی۔آکر میں سی جے ایف پی ممبران کو پھولوں کو گلدستہ اور شیلڈ پیش کی گئی۔

فنکاروں کی تربیت کیلئے ٹی وی اور نان کمرشل تھیٹر بہترین درس گاہ ہیں،سہراب افگن

ٹی وی کے سینئراداکار اورڈائریکٹر سہراب افگن نے کہا ہے کہ نوجوان فنکاروں کی بنیادی تربیت کے لئے ٹی وی اور نان کمرشل تھیٹر بہترین درس گاہ ہیں مگر افسوس کے ساتھ کہنا پڑتا ہے کہ نئے فنکار اپنے سینئرز سے کچھ سیکھنا نہیں چاہتے ، دور حاضر کا موجودہ کمرشل تھیٹر بگاڑ کا شکار ہو چکا ہے ،نان پروفیشنل لوگوں نے کمرشل تھیٹر کی بربادی میں اہم کردار ادا کیا ہے ۔ سہراب افگن نے کہا کہ ماضی کے فنکار انتہائی باصلاحیت اور اپنے کام سے عشق کرنے والے لوگ تھے مگر نئے فنکار اپنے سینئرز سے کچھ سیکھنا ہی نہیں چاہتے ۔ان کا کہنا ہے کہ فنکاروں کو بڑھاپے میں جوانی کی نسبت زیادہ توجہ اور احترام کی ضرورت ہوتی ہے مگر افسوس کہ سینئرز کو ہر طرف سے نظر انداز کیا جا تا ہے ۔ حکومت کا فرض بنتا ہے کہ فنکاروں کی فلاح و بہبود کے لئے ایسے اقدامات کیے جائیں کہ ان کو پڑھاپے میں کسی کے آگے ہاتھ نہ پھیلانا پڑے ۔

سرفراز وکی اور ثمینہ بٹ شادی کی خوشی میں دوستوں کو عشائیہ دیں گے

گزشتہ دنوں شادی کرنے والے ٹی وی اور تھیٹر کے معروف فنکار سرفراز وکی اور ثمینہ بٹ دوستوں کو عشائیہ دیں گے۔ یاد رہے کہ دونوں نے اچانک خاموشی سے شادی کرلی جس کا ان کے بہت سے قریبی دوستوں کو بھی بعد میں پتہ چلا۔اس بارے میں ثمینہ بٹ نے’’پاکستان‘‘کو بتایا کہ ہم نے شادی جلد بازی میں نہیں کی بلکہ سوچ سمجھ کرکی ہے اور ویسے بھی میرا ایمان ہے کہ اس کا فیصلہ آسمانوں پر ہوتا ہے۔ایک سوال کے جوا ب میں انہوں نے کہا کہ میں خدا کی بے حدشکرگزار ہوں کہ مجھے سرفرازوکی جیسا محبت کرنے والا شوہر ملا۔شادی کے بعد بھی میں شوبزمیں کام جاری رکھوں گی۔ثمینہ بٹ نے مزیدکہا کہ شوبز میں لوگ ہر لڑکی کو بری نظرسے دیکھتے ہیں لیکن اب میں مطمئن ہوں کہ مجھے شوہر کی صورت میں تحفظ مل گیا ہے۔

ڈرامہ سیریل’’پجارن‘‘میں کامران جیلانی کا کام مکمل جلد آن ائیر ہوگی

ٹی وی کے میگا سٹار کامران جیلانی پروڈیوسر راشد خواجہ کی نئی ڈرامہ سیریل ’’دعائیں ‘‘ریکارڈنگ میں حصّہ لینے کے لئے فروری کے دوسرے ہفتے میں لاہور آئیں گے۔اس ڈرامہ سیریل کو عامر یوسف ڈائریکٹ کریں گے جبک ان دنوں اس کی کاسٹ فائنل کی جا رہی ہے۔اس ڈرامے میں ملک کے نامور فنکار کام کرتے ہوئے نظر آئیں گے ’’پاکستان‘‘سے گفتگو کرتے ہوئے کامران جیلانی نے بتایا کہ ’’دعائیں‘‘ورکنگ ٹائٹل ہے شاید اس پراجیکٹ کا نام آن ائیر سے قبل تبدیل ہوجائے ۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے بتایا کہ حال ہی میں انعام شاہ کی لکھی ہوئی پروڈیوسرز اختر حسنین اور عدنان صدیقی کی ڈرامہ سیریل’’پجارن‘‘میں میرا کام مکمل ہوگیا ہے۔’’پجارن‘‘جلد ہی نجی چینل سے آن ائیر ہوگی۔ جبکہ ڈائریکٹر اسد جبل کی ڈرامہ سیریل ’’روشنی‘‘ان دنوں آن ائیر ہے۔’’روشنی‘‘میں میرا کردار پاور فل ہونے کے ساتھ ساتھ پرفارمنس سے بھرپور ہے۔

عارف لوہار دس سال بعد اداکاری کریں گے فلم ’’آئی لو یو‘‘میں کاسٹ

لالی ووڈ کے سینئر ڈائریکٹر ظہور حسین گیلانی کی 13سال بعد فلمی صنعت میں واپسی ہوگئی ہے وہ ’’آئی لو یو‘‘کے نام سے فلم بنانے کی تیاریوں میں مصروف ہیں ۔اس فلم کے نمایاں اداکاروں میں افتخار ٹھاکر،رچل خان اور ملیحہ شامل ہیں۔اس فلم کے ڈائریکٹر آف فوٹو گرافی خالد محمود ہیں معروف فوک گلوکار عارف لوہار ’’آئی لو یو‘‘کی موسیقی ترتیب دینے کے ساتھ اس میں اداکاری کے جوہر بھی دکھائیں گے۔ظہور حسین گیلانی کا کہنا ہے کہ میں کاسٹنگ مکمل ہوتے ہیں فلم کی شوٹنگ شروع کردوں گا میں نے ’’آئی لو یو‘‘میں زیادہ تر نئے فنکاروں کو صلاحیتوں کے اظہار کا موقع فراہم کیا ہے۔یا درہے کہ عارف لوہار دس سال بعد کسی فلم میں کام کررہے ہیں انہوں نے آخری بار سید نور کی فلم ’’جگنی‘‘میں اداکاری کی تھی۔

مزید :

ایڈیشن 1 -