کرایہ کے حوالے سے لیبر قوانین پر عمل درآمد کیا جائے ،عبدالقیوم

کرایہ کے حوالے سے لیبر قوانین پر عمل درآمد کیا جائے ،عبدالقیوم

  

مٹہ ( نما ئندہ پاکستان )اتفاق ایسوسی ایشن مٹہ بازار صدر حاجی عبدالقیوم محمد زوبیر محمد ریاض اور دیگر نے کہا کہ مٹہ بازار میں اس وقت مارکیٹوں کی مالکان اور کریہ داروں کی درمیان کرایوں پر ایک بحران سی پیدا ہو چکی ہے جس سے مٹہ بازار میں کاروبا ر ٹھپ ہوکر لوگوں کی کرڑوں اور اربوں روپوں کو خطرہ لاحق ہوچکی ہے انہوں نے کہا کہ مالکان کریہ داروں پر لیبر قانون کی مطابق تین سالہ کی حساب سے25فی صد کی حساب سے کرایہ بڑھائے کیونکہ اس وقت مٹہ بازار میں اکثریت غریب دوکانداروں کی ہے جو موجودہ کرایوں کو برداشت کرنے کی طاقت نہیں رکھتی مٹہ تحصیل میں چوریوں منشیات اور دیگر جرائم میں اضافہ باعث تشویش ہے روک تھام میں پولیس مکمل طور پر ناکام ہوچکے ہے ذمہ دار پولیس افسران ڈی ایس پی مٹہ سرکل اور ایس ایچ او مٹہ یہاں سے تبدیل کرکے اس رحمت سے مذید مٹہ کی عوام کو چھٹکارا دیں تھانہ مارکیٹ کیلئے کرایہ کی نئے قانون منظور نہیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ روز مٹہ پریس کلب میں اپنے ایک ہنگامی پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا پریس کانفرنس سے تاحیات چیف ارگنائزر قاسم کاکا نے بھی خطاب کی جبکہ اس موقع پر مٹہ بازار کے جنرل سیکرٹری عثمان غنی سابق جنرل سیکرٹری عمر علی خان نذیر خان شیر علی احسان اللہ اور دیگر بھی موجود تھے انہوں نے کہا کہ اس وقت مٹہ بازار میں مالکان اور کرایہ داروں کی درمیان کرایوں کی جو بحران پیدا ہوچکی ہے اس بحران نے دوکانداروں کو ذہنی مشکلات سے دوچار کردی ہے اسلئے مالکان اور دوکاندار لیبر قانون کی مطابق تین سالہ 25فی صد اضافے پر عمل کریں انہوں نے کہا کہ تھانہ مارکیٹ کیلئے نئے کرایہ نامہ منظور نہیں بلکے ان لوگوں کیساتھ ہونے والے معاہدے پر عمل درامد ہوگی کیونکہ یہ تمام مارکیٹ کو ان دوکانداروں نے اس معاہدے کی تحت پیسے لگاکر بنائے ہے انہوں نے کہا کہ مارکیٹ کو خالی کرانے کا خیال مٹہ انتظامیہ دل سے نکال دے انہوں نے کہا کہ اس وقت مٹہ میں چوریوں اور منشیات سمیت دیگر جرائم میں خطر ناک حد تک اضافہ ہوچکا ہے جو مٹہ پولیس کے ڈی ایس پی اور ایس ایچ او کی ناکامی کامنہ بولتا ثبوت ہے انہوں نے کہا کہ ایس ایچ او مٹہ نے تھانے کی بجائے اپنے کوارٹر کو تھانے کا دفتر بنادیا ہے جس سے عوام کو شدید مشکلات کا سامنا ہے انہوں ڈی پی او سوات سمیت دیگر اعلیٰ پولیس افسران سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اگر موجودہ ڈی ایس پی مٹہ سرکل اور ایس ایچ او رحمت ہوں تو یہاں سے تبدیل کرکے یہاں کی عوام کو اس رحمت سے چھٹکارہ دلادیں انہوں نے کہا کہ اگر پولیس افسران نے اپنے من مانی ختم نہیں کی اور تھانہ مارکیٹ کی دوکانداروں کی تنگ کرنے سے باز نہیں رہے تو مجبوراً ہمیں سڑکوں پر نکلنے اور احتجاج شروع کرنے ہونگے جس کی تمام تر ذمی داری مٹہ پولیس کے افسران پر ہوگی انہوں نے مٹہ بازار کی تمام دوکانداروں کو خبردار کیا کہ وہ مالکان کیساتھ کسی بھی معاہدے کرنے کی وقت بازار یونین کو اعتماد میں لیں ورنہ ذمہ دارخود ہونگے پریس کانفرنس میں انتظامیہ سے مطالبہ کیا گیا کہ مٹہ مین بازارون سے غیر قانانی پارکنگ اور فروٹ اور سبزیو ں فروشوں پر پابندی لگادیں اور بازار کو ٹریفک کیلئے رواں دواں رکھیں

مزید :

پشاورصفحہ آخر -