”طالبان کی کوئی جائز بات ہے تو اسے سننے میں کوئی قباحت نہیں“،گورنر خیبر پختونخوا

”طالبان کی کوئی جائز بات ہے تو اسے سننے میں کوئی قباحت نہیں“،گورنر خیبر ...
”طالبان کی کوئی جائز بات ہے تو اسے سننے میں کوئی قباحت نہیں“،گورنر خیبر پختونخوا

  

پشاور(ڈیلی پاکستان آن لائن)گورنر خیبر پختونخوا نے کہا کہ طالبان کی کوئی جائز بات ہے تو اسے سننے میں کوئی قباحت نہیں ہے مگر یہ کبھی نہیں ہوگا کہ طالبان کے سامنے جھک جائیں یا ہتھیار ڈال دیں ۔

چار سدہ میں سیشن کورٹ کے گیٹ پرخود کش دھماکہ ،6 افراد شہید ،20زخمی ،سیکیورٹی فورسز اور حملہ آورں کی فائرنگ کے تبادلے میں دودہشت گرد مارے گئے

تفصیلات کے مطابق چارسدہ کی تحصیل تنگی کی کچہری کے باہر خودکش دھماکے کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے گورنر ظفر اقبال جھگڑا نے کہا کہ کوئی ایسی قوت نہیں جس سے آپ بات نہیں کرسکتے، صرف طالبان کی بات نہ کریں کہ بات نہیں ہوسکتی، ہرایک سے بات ہوسکتی ہے، ہم معاملات کو احسن طریقے سے حل کرنا چاہتے ہیں۔

گورنر کے پی کے کا کہنا تھا کہ ہم ہر چیلنج کا مقابلہ کرنے کیلئے پوری طرح تیار ہیں ،حالیہ واقعات پر بہت جلد قابو پالیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ بڑی پیچیدگیاں ہیں اور ایسی قوتیں ہیں جن کی وجہ سے یہ سب ہورہا ہے۔یاد رہے کہ تنگی کچہری دھماکے میں6افراد شہید جبکہ 20 زخمی ہوگئے تھے۔

چارسدہ میں سیشن کورٹ پر حملے اور خود کش دھماکے کی ذمہ داری جماعت الا حرار نے قبول کرلی

مزید :

پشاور -