گھریلو ملازمہ گمشدگی کامعاملہ ،عدالت کاایس ایچ او تھانہ جوہر ٹاؤن کو بازیاب کرانے کا حکم

گھریلو ملازمہ گمشدگی کامعاملہ ،عدالت کاایس ایچ او تھانہ جوہر ٹاؤن کو بازیاب ...

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائی کورٹ کے مسٹر جسٹس راجہ محمود عباسی نے جوہر ٹاؤن کے علاقے میں 12 سالہ گھریلو ملازمہ کی گمشدگی کے معاملہ پرایس ایچ او تھانہ جوہر ٹاؤن رانا شکیل کو بچی بازیاب کروانے کا حکم دے دیا ،احاطہ عدالت میں گھریلو ملازمہ کی ماں اور مالکہ میں جھڑپ بھی ہوئی،گھریلو ملازمہ کی ماں اورمالکن بچی کی گمشدگی کے حوالے سے ایک دوسرے پر الزام لگاتی رہیں ۔گھریلو ملازمہ کی والدہ زاہدہ بی بی کی درخواست کی سماعت کے دوران مالکہ بشرا بی بی نے عدالت کو آگاہ کیا کہ زاہدہ بی بی نے 12 سالہ گھریلو ملازمہ کے عوض ایک لاکھ 26 ہزار روپے ایڈوانس وصول کئے اور دو گھنٹوں بعد ہی بچی کو واپس بلوا لیا ،مالکہ بشرا بی بی نے کہاکہ زاہدہ بی بی کا بچی کی گمشدگی سے متعلق دعویٰ جھوٹ پر مبنی ہے ،12 سالہ مہک کی والدہ زاہدہ بی بی نے بتایا کہ بیٹی کو بشرا بی بی کے گھر ملازمہ کے طور پر رکھوایا تاہم چند روز بعد ہی بیٹی لاپتہ ہوئی ،والدہ نے استدعا کی کہ عدالت بیٹی کو بازیاب کروا کر ماں کے حوالے کرنے کا حکم دے ۔

بازیاب

مزید :

صفحہ آخر -