ملیحہ لودھی کی انتو نیو گو تیریس صدر سلامتی کونسل سے ملاقات ، اقوام متحدہ کی پاک بھارت کشیدگی کم کرنے کیلئے کردار کی پیشکش

ملیحہ لودھی کی انتو نیو گو تیریس صدر سلامتی کونسل سے ملاقات ، اقوام متحدہ کی ...

  

نیویارک (این این آئی)پلوامہ واقعے کے بعد کشیدگی کے پیش نظر پاکستان نے اقوام متحدہ میں سفارتی کوششیں تیز کردیں۔اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی نے یو این سیکریٹری جنرل انتونیو گوتیریس اور سلامتی کونسل کے صدر سے ملاقاتیں کیں اور انہیں بھارت کی دھمکیوں اور وزیراعظم پاکستان کے مؤقف سے آگاہ کیا۔جس کے بعد اقوام متحدہ نے پاکستان اور بھارت کے درمیان کشیدگی کم کرنے کے لیے کردار ادا کرنے کی پیشکش کی ہے۔ملیحہ لودھی نے اقوام متحدہ کی توجہ مقبوضہ کشمیر میں جاری غاصبانہ کاروائیوں کی جانب دلائی اور مطالبہ کیا کہ وہ دونوں ممالک کے درمیان کشیدگی کم کرانے کیلئے اقوام متحدہ کو کردار ادا کرنا چاہیے۔ملیحہ لودھی نے کہا ہے کہ پلوامہ واقعہ کو مقبوضہ کشمیر کی صورتحال لے تناظر میں دیکھا جائے ،تمام مسائل کے حل کیلئے بھارت سے بات چیت کیلئے تیار ہیں،بھارت نے اور خطرہ پیدا کرنے کی کوشش کی تو پاکستان جواب کیلئے تیار ہے۔ ملیحہ لودھی نے کہا کہ بھارتی جارحانہ رویہ خطے کو مزید غیر مستحکم کررہا ہے، ضرورت پڑی تو پاکستان بھارتی اشتعال انگیزی کا بھرپور جواب دے گا۔پاکستانی مستقل مندوب نے مزید کہا کہ مسئلہ کشمیر پرامن طور پر حل ہونا چاہیے، بات چیت کے زریعے مسئلہ حل کیا جاسکتا، مطمئن ہوں کہ اقوام متحدہ میں اس معاملے پر ایک انڈراسٹینڈنگ ہے۔ ترجمان اقوام متحدہ کے مطابق سیکریٹری جنرل انتونیو گوتریس نے پاکستان اور بھارت کے درمیان کشیدگی کم کرنے کیلئے کردار ادا کرنے کی پیشکش کی ہے۔ ترجمان کے مطابق سیکریٹری جنرل اقوام متحدہ نے پاک بھارت کشیدگی پر شدید تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ دونوں ممالک کشیدگی کم کرنے کے لیے فوری اقدامات کریں۔

پاکستان ،اقوام متحدہ

مزید :

صفحہ اول -