چارسدہ،باچا خان یونیورسٹی کے ٹیچرز ایسوسی ایشن کا ہنگامی اجلاس

  چارسدہ،باچا خان یونیورسٹی کے ٹیچرز ایسوسی ایشن کا ہنگامی اجلاس

  



چارسدہ(بیو رو رپورٹ)باچا خان یونیورسٹی کے ٹیچر ز ایسوسی ایشن کا ہنگامی اجلاس زیر صدارت اکرام اللہ خان منعقد ہوا۔اجلاس کے دوران پشاور میں 14وائس چانسلروں کے غیر قانونی اجلاس کی شدید الفاظ میں مذمت کی گئی اور اس امر کو گورنر خیبرپختونخوا ں کے گورنرکے احکامات کے خلاف ورزی قرار دیا گیا۔تفصیلات کے مطابق با چا خان یونیورسٹی کے اساتذہ کی تنظیم ٹیچر ایسوسی ایشن (بیوٹا)کے اجلاس میں پشاور کے مختلف جامعات کے 14وائس چانسلروں کی بیٹھک کو غیر قانونی قراردیا گیا ہے،اس حوالے سے اجلاس کے شرکاء نے واضح کیا کہ خیبر پختونخوا ں کے مختلف جامعات کو شدید مالی بحران کے باوجود 14وائس چانسلروں کی غیر قانونی بھرتیوں میں غیر ضروری ذاتی دلچسپی کئی سوالات کو جنم دے رہی ہے،وائس چانسلر گورنر کے احکامات کے تابع ہوتے ہیں لیکن ان 14وائس چانسلروں نے گزشتہ روز ایک غیر قانونی اجلاس طلب کیا تھا جس کی ہم شدید مذمت کرتے ہیں اور حکومت سے اس اجلاس کے تحقیقات کا مطالبہ کرتے ہیں کیونکہ اس وقت صوبے کے مختلف جامعات مالی بحران سمیت انتظامی عہدوں کی کمی کا بھی شکا رہیں جبکہ جامعات میں انتظامی عہدوں کو قصداً خالی رکھا گیا ہے تاکہ ان کی غیر قانونی من مانیاں بلا رکاوٹ جاری رہے۔ اس موقع پر انہوں نے گورنر کی جانب سے جامعات میں غیر قانونی بھرتیوں کو روکنے کے مراسلے پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس سے پورے صوبے کے جامعات کے ملازمین میں خوشی کے لہر دوڑ گئی ہے جس کی ہماری تنظیم بیوٹا ہر قسم کی حمایت کا اعلان کرتی ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر