منشیات فروشوں سے آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے گا،آر پی او کوہاٹ

    منشیات فروشوں سے آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے گا،آر پی او کوہاٹ

  



کوھاٹ (بیورو رپورٹ) ریجنل پولیس آفیسر کوہاٹ طیب حفیظ چیمہ نے پولیس افسران پر زور دیا ہے کہ اضلاع کے مابین مشترکہ انٹیلی جنس نظام کو مزید فعال کرکے استحکام امن اور انسداد جرائم کیلئے مربوط حکمت عملی وضع کی جائے۔ قانون نافذ کرنیوالے متعلقہ اداروں کیساتھ ملکر مجرمانہ سرگرمیوں میں ملوث اشتہاریوں،منشیات فروشوں اور خصوصاً آئس نشہ بیچنے والوں کیساتھ آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے۔بدامنی اور جرائم کے مرتکب عناصر کی سرکوبی کیلئے پروایکٹیو پولیسنگ کے عمل کو عصر حاضر کے درپیش چیلنجز کے مطابق ڈھالا جائے اور شہریوں کے تحفظ اورحکومتی رٹ کوبرقرار رکھنے کیلئے تمام وسائل بروئے کار لائے جائیں۔وہ اپنے دفتر میں امن وامان کے قیام،انسداد جرائم اور پبلک پولیسنگ کے حوالے سے منعقدہ پولیس کے اعلیٰ سطحی اجلاس سے خطاب کررہے تھے۔اجلاس میں ڈی پی او کوہاٹ کیپٹن(ر)منصور امان،ڈی پی او ہنگو شاہد احمد خان،ڈی پی او کرک نوشیر خان،ڈی پی او اورکزئی صلاح الدین کنڈی،ایس پی انوسٹی گیشن کوہاٹ عبدالحئی،ایس پی انوسٹی گیشن ہنگو زین خان جدون،ایس پی انوسٹی گیشن کرک گل نواز خان،ڈی ایس پی درہ آدم خیل صنوبر شاہ،ڈی ایس پی سی ٹی ڈی فضل واحد،ڈی ایس پی کرم ظریف خان،ڈی ایس پی اورکزئی محبوب خان،پی ایس او ٹو ڈی آئی جی انسپکٹر راضی گل،آفس سپرنٹنڈنٹ نور افغان، پی اے ٹو ڈی آئی جی محمد نفیس اور دیگر متعلقہ پولیس افسران بھی موجودتھے۔اجلاس میں قبائلی اضلاع سمیت ریجن بھر میں امن وامان کی مجموعی صورتحال، جرائم کی شرح اور پولیس کی استعداد کار کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔اجلاس کے دوران ریجنل پولیس آفیسر کو قبائلی اضلاع سمیت کوہاٹ ریجن کے تمام تھانوں کی سطح پر درج مقدمات کی تفتیش میں ہونیوالی پیش رفت،پولیس پبلک لیزان،نیشنل ایکشن پلان کے تحت منعقدہ سرچ اینڈ سٹرائیک آپریشنز میں حاصل ہونیوالی کامیابیوں،اصلاحاتی ایجنڈے کے تحت معرض وجود میں لائے گئے خدمت عامہ کے شعبوں کی کارکردگی اور ماہوار تناسب سے مختلف امور میں پولیس کے طرز عمل اور کارکردگی پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر