انڈس موٹرزپیداواری استعدادبہتربنارہی ہے،سی ای او

انڈس موٹرزپیداواری استعدادبہتربنارہی ہے،سی ای او

  



کراچی (پ ر)ٹویوٹا آئی ایم سی نے کہا ہے کہ مالی سال 2019-2020 کی پہلی ششماہی کے دوران معاشی سست روی، ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر میں کمی اور حکومت کی طرف سے متعارف کرائی گئیں پالیسیوں اور ادارہ جاتی اصلاحات کی وجہ سے پاکستان میں گاڑیوں کی طلب میں خاطر خواہ کمی آئی۔ آئی ایم سی کا کہنا ہے کہ درآمدات پر اضافی کسٹم ڈیوٹی اور فیڈرل ایکسائز ڈیوٹی کے ساتھ ساتھ افراط زر کی بڑھتی ہوئی شرح اور صارفین کی قوت خرید میں کمی نے بھی گاڑیوں کی طلب کو متاثر کیا ہے۔انڈسٹری کی ترقی کا زیادہ تر انحصار حکومت کی پالیسیوں میں تسلسل اور سازگار معاشی صورتحال پر ہوتا ہے۔علی اصغر جمالی، سی ای او، انڈس موٹر کمپنی نے کہا ”مجھے یہ بتانے میں خوشی محسوس ہورہی ہے کہ اس مدت کے دوران آئی ایم سی نے اپنی پیداواری استعداد کار کو بہتربنایا۔

مزید : کامرس