خاتون سمیت 2افراد قتل، حادثات میں 5جاں بحق، 4کی خودکشی

  خاتون سمیت 2افراد قتل، حادثات میں 5جاں بحق، 4کی خودکشی

  



ملتان‘ خیر پور سادات‘ مظفر گڑھ‘ محسن وال‘ چھب کلاں‘ خانیوال‘ رحیم یار خان‘ ہارون آباد‘ راجن پور‘ بہاولپور (وقائع نگار‘ نمائندگان پاکستان) خاتون سمیت 2افراد کو قتل کردیاگیا حادثات میں 5افراد جاں بحق ہوگئے جبکہ 4نے خود کشی کرلی تفصیل کے مطابق کچہ کے علاقے کوٹلہ مہرے والی میں پیرن دتہ بوسن کو اپنی بہن فیزا بی بی پر پہلوان آرائیں سے ناجائز تعلقات کا شبہ تھا گزشتہ روز پہلوان آرائیں اور فیزا بی بی کو ایک ساتھ (بقیہ نمبر15صفحہ12پر)

دیکھ کر پیرن دتہ بوسن نے چاقو سے حملہ کردیا جس سے فیزا بی بی موقع پر ہی دم توڑ گئی جبکہ مبینہ آشنا پہلوان آرائیں شدید زخمی حالت میں بھاگ جانے میں کامیاب ہوگیا قتل کی اطلاع ملتے ہی ایس ایچ او خیرپورسادات شمس الللہ قیصرانی موقع پر پہنچ گئے جبکہ متعلقہ تھانہ کی پولیس دیر سے پہنچی پولیس تھانہ فاضل پور نے لاش کا پوسٹ مارٹم کروانے کے بعد ورثاء کے حوالے کردی جس کی تدفین کردی گئی جبکہ ملزم فرار ہوجانے میں کا میاب ہوگیا ہے مقتولہ کے ورثاء نے اندراج مقدمہ کی درخواست گزاری مگر پولیس نے ان کی مدعیت میں مقدمہ درج کرنے سے انکار کردیا ہے پولیس کی مدعیت میں مقدمہ درج کیا جارہا ہے دوسری جانب زخمی ہونے والے پہلوان آرائیں کے ورثاء نے بھی کارروائی کرانے سے انکار کردیا ہے یاد رہے مقتولہ فیزا بی بی پرویز بوسن کی بیوی ہے جو کہ بوسن گینگ کے سابق سرغنہ طارق بوسن کا بھائی ہے طارق بوسن پولیس مقابلہ میں مارا گیا تھا۔جبکہ میاں چنوں کے نواحی گاؤں 90پندرہ ایل کا رہائشی ظفر اقبال ولدامیر ایک رات سے لاپتہ تھا،جس کی نعش گزشتہ روز گاؤں کے سڑک کے کنارے سے ملی،اس بارے میں ایس ایچ او تھانہ چھب کلاں محمد آصف نے بتایا کہ نوجوان کو فائرنگ کرکے قتل کیا گیا ہے،معاملے کی تحقیقات جاری ہیں جلد ہی ملزمان کو گرفتار کرلیا جائے گا۔ادھر خانیوال نزد 167 دس آر 2 موٹرسائیکل میں تصادم محمد یار ولد نصرت سکنہ 167 دس آر جاں بحق جبکہ شان علی ولد ارشد اور اسد علی ولد ارشد سکنہ 168 دس آر زخمی ریسکیو 1122 نے ابتدائی طبی امداد کے بعد سول ہسپتال منتقل کر دیا۔ علاوہ ازیں چوک پٹھانستان کارہائشی39سالہ جاوید خان جوکہ نوریوالی کے نزدیک ریلوے پھاٹک بند ہونے کے باوجود ریلوے لائن عبورکررہاتھاکہ اچانک لاہور سے کراچی جانیوالی شالیمار ایکسپریس کی زد میں آگیا اور زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے موقع پر ہی دم توڑگیا‘ اطلاع پاکر ریسکیو اورپولیس نے موقع پر پہنچ کر جاوید خان کی ہلاکت بارے تصدیق کرکے لاش تدفین کے لئے ورثاء کے حوالے کردی۔جبکہ تھانہ فقیروالی کی حدود میں واقع چک نمبر 131سکس آر جٹاں والی میں مستری ارشاد نامی شخص کے مکان کی بوسیدہ چھت اچانک کر گئی، جس کے نتیجے میں چھ سالہ بچی جاں بحق ہو گئی۔ دریں اثنا راجن پور،انڈس ہائی وے پر گور نمنٹ بوائز کالج کے سامنے ٹرالر کی موٹرسائیکل سوار کوٹکر،نوجوان علی رضا موقع پرجاں بحق، متوفی علی رضا المدینہ کنسٹریکشن کمپنی کے مالک غلام شبیر کا بھتیجا تھا، متوفی کی وفات پر راجن پور شہر میں سوگ کی کیفیت طاری رہی، نماز جنازہ ساڑھے آٹھ بجے ٹھیڑی روڈ پرادا کیا گیا ٹریفک پولیس کے آفیسرواہلکاروں نے ٹرالر کوقبضہ میں لے کر مزید کاروائی شروع کردی تفصیلات کے مطابق گورنمنٹ کنٹریکٹر غلام شبیر کابھتیجا علی رضا صبح سویرے راجن پور شہر کی جانب آرہا تھا کہ گور نمنٹ بوائز کالج کے سامنے تیز رفتار لوڈ ٹرالر نے اُسے ٹکر ماردی جس کے نتیجہ میں نوجوان شدید زخمی ہوکر جاں بحق ہوگیا تھا نہ سٹی پو لیس نے مزید کاروائی شروع کردی ہے۔ادھر صحافی کابیٹاٹریفک حادثہ میں جاں بحق‘ سمہ سٹہ کے سابق کونسلر و سینئر صحافی شیخ محمد سلیم رازی کہ جواں سالہ بیٹا شارخ سلیم اپنے دوست عمار علوی کے ہمراہ شادی کی تقریب بہاولپور سے واپس اپنی گاڑی میں آ رہے تھے کہ گلستان ملز کے قریب کے ایل پی روڈ پر احمد پور شرقیہ سے بہاولپور آنے والا ڈالا کے پی 1393تیز رفتاری کے باعث یو ٹرن لیتے ہوئے بے قابو ہو کر ٹکراگیا جس کے نتیجے میں شارخ سلیم موقع پر جاں بحق ہوگیا جبکہ عمار علوی اور مزدا ڈرائیور اکمل شدید زخمی ہوگئے جنہیں ریسکیو 11بہاول وکٹوریہ ہسپتال منتقل کر دیا پولیس اطلاع کے مطابق ڈرائیور اکمل زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ہسپتال میں ہی دم توڑ گیا شارخ سلیم کی لاش گھر پہنچنے پر کہرام برپا ہوگیا شارخ سلیم کی نماز جنازہ نور مسجد عیدگاہ سمہ سٹہ میں ادا کی گئی نماز جنازہ میں سیاسی سماجی صحافی اور اہل علاقہ نے کثیر تعداد میں شرکت کی نماز جنازہ میں رقت آمیز مناظر تھے فضا سوگوار تھی۔ تھانہ مظفر آباد کے علاقے میں چالیس سالہ شخص نے حالات سے دلبرداشتہ ہوکر ٹرین کے نیچے آکر خودکشی کرلی ہے۔معلوم ہوا ہے کہ تھانہ مظفر آباد کے علاقے القریش فیز 2 سے گراس منڈی پھاٹک کی طرف جاتے ہوئے ریلوے لائن پر آکر چالیس سالہ واجد ریل کے نیچے آکر خودکشی کرلی ہے۔اطلاع پر مقامی پولیس اور ریسکیو کی امدادی ٹیمیں موقع پر آگئیں۔جہنوں نے لاش قبضے میں لی۔جبکہ ضروری قانونی کاروائی کے بعد لاش ورثاء کے حوالے کردی ہے۔ رکن پور کی رہائشی22سالہ روبینہ بی بی‘ رحمن کالونی کی 40 سالہ نسیم بی بی نے آئے روز کی گھریلوناچاقی سے دلبرداشتہ ہوکر بھاری مقدار میں کالا پتھر مشروب میں گھول کر پی لیا‘ اسی طرح کوٹ سبزل کے رہائشی 25سالہ نوجوان نعمت اللہ نے فیکٹری نا چھوڑنے پربھائی انعام الحق سے جھگڑا ہوگیا جس سے دلبرداشتہ ہوکر بھاری مقدار میں گندم میں رکھنے والی زہریلی گولیاں کھالی‘ حالت تشویشناک ہونے پرورثاء نے تینوں کو طبی امداد کیلئے شیخ زید ہسپتال رحیم یارخان منتقل کیاجہاں طبی امداد کے باوجود تینوں افراد جانبرنہ ہوپائے اور جسم میں زہر پھیل جانے کے باعث دم توڑگئے جبکہ اقدام خودکشی کرنے والے5 افراد جن میں ہسپتال روڈ کی رہائشی22سالہ پروین بی بی‘ ظاہر پیر کی 30سالہ رخسانہ بی بی‘ آدم صحابہ کی30سالہ رشیداں بی بی‘ کشمور کی30سالہ راجی مائی اور خانپورکارہائشی20سالہ نوجوان محمد ذیشان کو ہسپتال میں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔

قتل /حادثات

مزید : ملتان صفحہ آخر