یہ نہ کریں ورنہ توہین کا نوٹس کر دیں گے، چیف جسٹس پاکستان نے شوکت بسرا کو قسم کھانے سے روک دیا

یہ نہ کریں ورنہ توہین کا نوٹس کر دیں گے، چیف جسٹس پاکستان نے شوکت بسرا کو قسم ...
یہ نہ کریں ورنہ توہین کا نوٹس کر دیں گے، چیف جسٹس پاکستان نے شوکت بسرا کو قسم کھانے سے روک دیا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ میں انتخابات کالعدم قرار دینے کی درخواست پر سماعت کے دوران رہنماتحریک انصاف شوکت بسرا روسٹرم پر آگئے ،شوکت بسرا نے کہاکہ میرا اس کیس سے تعلق نہیں لیکن میرے ہاتھ میں قرآن ہے اس کی قسم کھانا چاہتا ہوں،چیف جسٹس نے کہا کہ یہ نہ کریں ورنہ توہین کا نوٹس کر دیں گے۔

نجی ٹی وی چینل جیو نیوز کے مطابق  سپریم کورٹ میں چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی زیرصدارت بنچ نے انتخابات کالعدم قرار دینے کی درخواست پر سماعت کی، سماعت کے دوران رہنماتحریک انصاف شوکت بسرا روسٹرم پر آگئے ۔

شوکت بسرا نے کہاکہ میں بہاولنگر سے منتخب رکن اسمبلی ہوں، اس کیس میں پیش ہونا چاہتا ہوں،چیف جسٹس نے شوکت بسرا سے استفسار کیا کہ آپ علی خان کے وکیل ہیں؟شوکت بسرانے جواب دیا کہ نہیں میں ان کا وکیل نہیں ہوں،چیف جسٹس نے کہاکہ آپ بیٹھ جائیں ہمیں وکیلوں کو سننے دیں، شوکت بسرا نے کہاکہ میں بھی ہائیکورٹ کا وکیل ہوں،چیف جستس پاکستان نے کہاکہ مبارک ہو آپ ہائیکورٹ کے وکیل ہیں مگر آپ تشریف رکھیں،شوکت بسرا نے استدعا  کی کہ میری بات تو سن لیں،چیف جسٹس نے کہاکہ آپ بیٹھ جائیں ورنہ لائسنس منسوخ کرنے کا حکم دے کر توہین عدالت کا نوٹس بھی کر سکتے ہیں۔

چیف جسٹس نے شوکت بسرا سے استفسار کیا آپ کا اس کیس سے تعلق کیا ہے؟شوکت بسرا نے کہاکہ میرا اس کیس سے تعلق نہیں لیکن میرے ہاتھ میں قرآن ہے اس کی قسم کھانا چاہتا ہوں،چیف جسٹس نے کہا کہ یہ نہ کریں ورنہ توہین کا نوٹس کر دیں گے،شوکت بسرا نے کہاکہ پاکستان کی سب سے بڑی عدالت ہے،چیف جسٹس نے کہاکہ تقریر نہ کریں، ہمارے سامنے، پہلے سن لیجیے، بالکل ہی اخلاق چھوڑ دیا ہے،آئندہ آپ نے یہ کیا تو وکالت کا لائسنس منسوخی کا معاملہ بار کو بھیجیں گے،سب نے ملکر سپریم کورٹ کو مذاق بنایا ہوا ہے ۔