بھارتی و پاکستانی فنکاروں کی ثقافتی رشتوں کو پروان چڑھانے کی کوششیں

بھارتی و پاکستانی فنکاروں کی ثقافتی رشتوں کو پروان چڑھانے کی کوششیں

لاہور(فلم رپورٹر)بھارتی فنکاروں نے پاکستان اور انڈیا کے درمیان ثقافتی و دوستی کے رشتوں کو مزید پروان چڑھانے کےلئے پاکستان کے کثرت سے چکر لگانا شروع کر دئیے ہیںجبکہ دوسری جانب علی حیدر ، راحت فتح علی خان ، غلام علی سمیت دیگرپاکستانی فنکار بھارت جاکر کروڑوں روپے کما رہے ہیں اور عالمی شہرت بھی حاصل کر رہے ہیں ۔ اس سلسلے میں بھارتی اداکار نصیر الدین شاہ آئے روز پاکستان میںفلموں اور تھیٹر ڈراموں میں کام کرنے کیلئے آتے رہتے ہیں اور اس مد میںلاکھوں روپے معاوضہ وصول کر رہے ہیں جبکہ ان کے ڈراموں اور فلموں کو دیکھنے کیلئے بھاری معاوضے کے ٹکٹ رکھے جاتے ہیں۔

 انکے تھیٹر ڈراموں اور فلموں کو دیکھنے کیلئے شائقین کی کثیر تعدادسینماﺅں اور تھیٹر ہالوں کا رخ کر تی ہے۔ اسی طرح گلوکار ہنس راج ہنس نے بھی شادی بیاہ کی تقریبات اور نجی کنسرٹ کرنے کیلئے لاہور آنا معمول بنالیا ہے اور وہ بھی لاکھوں روپے کما کر بھارت واپس جاتے ہیں۔ یوں پاک بھارت دوستی اور ثقافتی رشتوں کو بڑھانے کےلئے زیادہ سے زیادہ کام ہو رہا ہے۔ فلم انڈسٹری میں موجود چند ڈائریکٹرز اور ہنر مند بھارتی فلموں کی پاکستان میں نمائش کی مخالفت کر رہے ہیں۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ وہ خود بھی کوئی مقامی معیاری فلم بنانے سے قاصر ہیں۔ یوںفلم انڈسٹری اور ثقافتی حلقوں میں ان دنوں پاک بھارت دوستی اور امن کی آشا کے حوالے سے شوبز حلقوں میں بحث و مباحثہ جاری ہے۔

مزید : کلچر


loading...