وزارت پٹرولیم بتائے اچانک پٹرول بحران کیوں پیدا ہوا ،کیا اقدامات کئے ،ہائیکورٹ

وزارت پٹرولیم بتائے اچانک پٹرول بحران کیوں پیدا ہوا ،کیا اقدامات کئے ...

               لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے پٹرول بحران کے خلاف دائردرخواستوں پر وزارت پٹرولیم کے جوائنٹ سیکرٹری کو آج 21جنوری کوطلب کرتے ہوئے قرار دیا ہے کہ بادی االنظر میں یہ عوامی نمائندوں کی ذمہ داری ہے کہ وہ اسمبلی میں عوام کے مسائل اٹھائیں،عدالت کو بتایا جائے کہ اچانک یہ بحران کےسے پیدا ہوا اور اس پر قابوپانے کے لئے کیا اقدامات کئے گئے ہیں ۔مسٹر جسٹس سید منصور علی شاہ نے صفدر شاہین پیرزادہ اور گوہر نواز سندھو کی پٹرول بحران کے خلاف درخواستوں پر سماعت کی، درخواست گزاروں کی طرف سے عدالت میں موقف اختیار کیا کہ حکومت ملک کو ایسے چلا رہی ہے جیسے محلے کی دکان چلائی جاتی ہے، پٹرول کے حصول کیلئے عوام گزشتہ 10 دن سے خوار ہو رہے ہیں مگر مسلم لیگ (ن )کے وزیر ایک دوسرے پر ذمہ داری ڈال کر جان چھڑانے کی کوشش کر رہے ہیں،دوران سماعت عدالت نے قرار دیا کہ بادی االنظر میں یہ عوامی نمائندوں کی ذمہ داری ہے کہ وہ اسمبلی میں عوام کے مسائل اٹھائیں، عدالت نے وزارت پٹرولیم کے جوائنٹ سیکرٹری کو آج پیش ہونے کا حکم دیتے ہوئے قرار دیا کہ عدالت کو بتایا جائے کہ پٹرول بحران اچانک کیوں پیدا ہوا اور اس پر قابو پانے کے لئے حکومت نے کیا اقدامات کئے ہیں۔

وزارت بتائے

مزید : صفحہ آخر


loading...