وزیر اعظم کی زیر صدارت قومی ایکشن پلان کمیٹی کا اجلاس ختم ،صوبوں میں روابط بڑھانے پر اتفاق

وزیر اعظم کی زیر صدارت قومی ایکشن پلان کمیٹی کا اجلاس ختم ،صوبوں میں روابط ...
وزیر اعظم کی زیر صدارت قومی ایکشن پلان کمیٹی کا اجلاس ختم ،صوبوں میں روابط بڑھانے پر اتفاق

  


اسلام آباد ( مانیٹرنگ ڈیسک ) وزیر اعظم نواز شریف کی زیر صدارت قومی ایکشن پلان کمیٹی کا اجلاس ختم ہو گیا۔تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم کی جانب سے قومی ایکشن پلان کمیٹی پر عمل درآمد کے لیے ایپکس کمیٹیوں کا اجلاس وزیر اعظم ہاﺅس میں منعقد کیا گیا جس میں آرمی چیف جنرل راحیل شریف ، ڈی جی آئی ایس آئی لیفٹیننٹ جنرل رضوان اختر سمیت چاروں صوبوں کے وزرائے اعلیٰ اور وفاقی وزراءنے شرکت کی۔

قومی ایکشن پلان کمیٹی پر عمل درآمد کے لیے ہونے والے ایپکس کمیٹیوں کے مشترکہ اجلاس میں چاروں صوبوں کے چیف سیکرٹریز سمیت پولیس آئی جیز بھی شامل تھے۔اس اجلاس میں وزارت داخلہ کی جانب سے بریفنگ بھی دی گئی جبکہ دہشت گردی کے خاتمے کے لیے ایکشن پلان میں پیش رفت سمیت آئندہ کے لائحہ عمل پر بھی غور کیا گیا۔

عمران خان کا محکمہ اطلاعات خیبر پختونخواہ کے ملازمین 48 گھنٹوں میں بحال کرنے کا حکم

قومی ایکشن پلان کمیٹی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نواز شریف نے کہا ہے کہ تمام صوبے ہاتھوں میں ہاتھ ڈال کر دہشت گردی کا خاتمہ کریں۔جبکہ قومی ایکشن پلان پر عمل درآمد ہی دہشت گردی کی کنجی ہے۔جس کے ذریعے اس سے نجات حاصل کی جا سکتی ہے۔انہوں نے واضح کیا کہ نیشنل ایکشن پلان وفاق نے نہیں بلکہ قومی قیادت نے تشکیل دیا ہے اور صوبوں کو چاہیئے کہ اس پر عمل درآمد کو ہر صورت ممکن بنائیں۔

وزیر اعظم میاں نواز شریف کا کہنا تھا کہ صوبہ پنجاب نے قومی ایکشن پلان کے حوالے سے 7 اجلاس منعقد کیے ہیں جبکہ دوسرے صوبوں کو بھی چاہیئے کہ وہ بھی اس پر عمل درآمد کو یقینی بنائیں۔ جبکہ اس اجلاس میں صوبوں کے درمیان روابط کو تیز کرنے پر بھی اتفاق کیا گیا ہے۔

افتخار چوہدری کی طرف سے ہتک عزت کا دعویٰ، عمران خان کو عدالتی ’سمن‘ جاری

مزید : قومی /اہم خبریں


loading...