4 زندگیاں حادثات کی نذر، اتائی کے غلط انجکشن سے بچہ تڑپ تڑپ کر دم توڑ گیا

4 زندگیاں حادثات کی نذر، اتائی کے غلط انجکشن سے بچہ تڑپ تڑپ کر دم توڑ گیا

ملتان، ٹھٹھہ صادق آباد، خانیوال، احمد پور سیال، اوچشریف (وقائع نگار، نمائندگان) ٹریفک کے مختلف حادثات میں 10 سالہ بچے سمیت 4 افراد زندگی سے محروم ہوگئے اتائی کے غلط انجکشن سے 6 سالہ بچہ تڑپ تڑپ کر دم توڑ گیا ملتان سے وقائع نگار کیمطابق تھانہ ممتاز آباد کے علاقے دنیا پور روڈ نزد بہاولپور بائی پاس کے قریب سڑک کے کناے پیدل چلنے والے 10 سالہ بچے عادل شبیر کو تیز رفتار کار نے زور دار ٹکر ماری جس سے وہ شدید زخمی ہوگیا زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جاں بحق ہوگیا اسی طرح تھانہ مظفر آباد کے علاقہ ڈنگر منڈی مظفر گڑھ روڈ پر ایک تیز رفتار ٹرک نے موٹر سائیکل سوار 50 سالہ جمیل ولد محمد بخش کو پیچھے سے ٹکر ماری جس کے نتیجے میں وہ اپنی جان کی بازی ہار گیا جبکہ پولیس نے موقع پر پہنچ کر کاغذی کارروائی کی اور چلے گئے ٹھٹھہ صادق آباد سے نامہ نگار اور خانیوال سے نمائندہ پاکستان کیمطابق علی الصبح 4 بجے پرویز والا کے قریب لاہور سے کراچی جانے والا تیز رفتار ٹرک نمبر LES/7166شور کوٹ جانے والی کار سے ٹراگیا ۔ٹرک کارسے ٹکرانے کے بعد بے قابو ہوکر مخالف سمت میں سڑک کنارے درخت سے زور دار دھماکے سے جا ٹکرایا جس کے نتیجے میں ٹرک ڈرائیور عاشق ولد اللہ سکنہ پتوکی موقع پر ہی ہلاک ہو گیا اور ٹرک کا کنڈیکٹر ندیم ولد اختر سکنہ پتوکی جو پیچھے سو رہا تھا شدید زخمی ہو گیا کار ڈرائیور عبدالسلام ولد اشرف سکنہ پتوکی بھی شدید زخمی ہو گیا اطلاع ملنے جہانیاں پولیس کا ASIمیاں ریاض بھاری فورس کے ہمراہ مرقع پر پہنچ گیا اور پٹرولنگ پولیس کے اہلکار اور ریسکیو 1122خانیوال کی ٹیم بھی موقع پر پہنچ گئی اور ٹرک کا کیبن کاٹ کر ٹرک ڈرائیور کی لاش باہر نکالی اور زخمیوں کو تحصیل ہیڈ کواٹر ہسپتال جہانیاں پہنچایا احمد پور سیال سے نامہ نگار کیمطابق گڑھ مہاراجہ کی نزدیک باہو پل پر تیز رفتار کیری ڈبہ نے گڑھ مہاراجہ کے رہائشی غلام شبیر جو کہ اپنی بیوی اور پوتے کے ہمراہ موٹر سائیکل پر سوار ہوکر خانیوال جا رہے تھے کو ٹکر ماردی جس کے نتیجہ میں غلام شبیر موقع پر جاں بحق ہو گیا جبکہ اسکی بیوی اور پوتا شدید زخمی ہو گئے جن کو ایمرجنسی میں نشتر ہسپتال ریفر کر دیا گیا ہے۔ اوچ شریف سے سٹی رپورٹر کیمطابق نواحی علاقے ودھنور کے رہائشی حبیب احمد کے 6سالہ بچے محمد ادریس کو معمولی بخار ہونے پر اس کا والد حبیب احمد اپنی بیوی کے ہمراہ دوائی لینے کے لئے خیر پور ڈاہا عطائی اصغر کے کلینک پر گیا جہاں بچے کو چیک کرنے کے بعد عطائی اصغر نے بچے کو جیسے ہی انجکشن لگایا تو بچہ تڑپنے لگا اور بچہ تڑپتے ہوئے ماں کی گود میں جاں بحق ہو گیا ، بچے کے جاں بحق ہوتے ہی والدہ پر غشی طاری ہو گئی اس صورتحال کو دیکھ کر عطائی اصغر کی دوڑ لگ گئی اور وہ موقع سے فرار ہو گیا ، والدین کی چیخ و پکار پر لوگوں نے تھانہ دھوڑ کوٹ پولیس کو اطلاع دی پولیس نے موقع پر پہنچ کر بچے کی نعش کو پوسٹمارٹم ک لئے رورل ہیلتھ سنٹر اوچ شریف منتقل کیا ، ایس ایچ او تھانہ دھوڑ کوٹ جاوید عالم نے بتایا کہ ملزم کے خلاف مقدمہ درج کرکے اسے گرفتار کرکے متاثرہ خاندان کو انصاف فراہم کیا جاے گا ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر