عبدالرشید غازی قتل کیس، پرویز مشرف کی جائیداد ضبطگی کی رپورٹ عدالت میں جمع، ملزم کو اشتہاری قرار دینے اور ریڈ وارنٹ جاری کرنیکی درخواست بھی دائر

عبدالرشید غازی قتل کیس، پرویز مشرف کی جائیداد ضبطگی کی رپورٹ عدالت میں جمع، ...
عبدالرشید غازی قتل کیس، پرویز مشرف کی جائیداد ضبطگی کی رپورٹ عدالت میں جمع، ملزم کو اشتہاری قرار دینے اور ریڈ وارنٹ جاری کرنیکی درخواست بھی دائر

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) عبدالرشید غازی قتل کیس میں سابق صدر پرویز مشرف کے جائیداد ضبط کرنے کی رپورٹ عدالت میں جمع کرا دی گئی ہے۔ ایڈیشنل سیشن جج نے ریڈ وارنٹ جاری کرنے کی درخواست پر دلائل آئندہ سماعت پر دینے کی ہدایت کرتے ہوئے سماعت 30 جنوری تک ملتوی کر دی ہے۔

دبئی اور پاکستان میں بیک وقت دنیا کے پہلے’’ گولڈ پلیٹڈ ہاؤسنگ پروجیکٹ‘‘ کی تعمیر کااعلان

تفصیلات کے مطابق ایڈیشنل سیشن جج پرویز القادر میمن کی عدالت میں عبدالرشید غازی قتل کیس کی سماعت ہوئی جس دوران پرویز مشرف کی جائیداد ضبطگی کی رپورٹ جمع کرائی گئی۔ ڈپٹی کمشنر اسلام آباد کی جانب سے جمع کرائی گئی تحریری رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ سابق صدر پرویز مشرف کی جائیداد ضبط کر لی گئی ہے۔

ذرائع کے مطابق پرویز مشرف کو اشتہاری ملزم قرار دینے اور ان کے ریڈ وارنٹ جاری کرنے کی درخواست بھی عدالت میں جمع کرائی گئی جس میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ عدالت کواشتہاری ملزم کے ریڈ وارنٹ جاری کرنے کا مکمل اختیار ہے۔ ایڈیشنل سیشن جج نے استفسار کیا کہ عدالت کی رہنمائی کریں کہ کس قانون کے تحت وزارت داخلہ کو حکم جاری کیا جائے۔

اسامہ بن لادن اپنے بیٹے کو القاعدہ کا خلیفہ بنانا چاہتے تھے،سی آئی اے

انہوں نے ریڈوارنٹ کے اجراءدرخواست پر مدعی مقدمے کے وکیل کو دلائل آئندہ سماعت پر دینے کی ہدایت کرتے ہوئے سماعت 30 جنوری تک ملتوی کر دی ہے۔

مزید : قومی /اہم خبریں