’’چھٹتی نہیں ہے یہ کافر منہ کو لگی ہوئی ‘‘بھارتی ٹیم کی کپتانی چھوڑنے والے مہندرا سنگھ دھونی پریکٹس سیشن میں ’’کپتانی ‘‘ کا شوق پورا کرتے رہے

’’چھٹتی نہیں ہے یہ کافر منہ کو لگی ہوئی ‘‘بھارتی ٹیم کی کپتانی چھوڑنے والے ...
’’چھٹتی نہیں ہے یہ کافر منہ کو لگی ہوئی ‘‘بھارتی ٹیم کی کپتانی چھوڑنے والے مہندرا سنگھ دھونی پریکٹس سیشن میں ’’کپتانی ‘‘ کا شوق پورا کرتے رہے

  

کولکتہ (ڈیلی پاکستان آن لائن)بھارتی کرکٹ ٹیم کے جارح مزاج بلے باز اور وکٹ کیپر مہندرا سنگھ دھونی نے گو کہ ’’کپتانی کے بوجھ ‘‘ سے آزادی حاصل کر لی ہے لیکن ورات کوہلی کو کپتانی سونپنے کے بعد بھی ٹیم میں ایک عام کھلاڑی کی حیثیت سے کھیلنے والے دھونی میدان میں اب بھی ’’فعال کردار ‘‘ ادا کر رہے ہیں اور  آج پریکٹس سیشن میں اپنا ’’کپتانی کا شوق‘‘ پورا کرتے رہے ۔

انگلینڈ کے خلاف دوسرے ون ڈے میں یوراج سنگھ کے ساتھ ریکارڈ  پارٹنر شپ قائم کرتے ہوئے سینچری جڑنے والے سابق بھارتی کپتان نے انگلینڈ کے خلاف کل(اتوار کو) ہونے والے تیسرے اور آخری ون ڈے میچ سے پہلے پچ کا معائنہ سمیت کپتان کے تمام کاموں کو انہوں نے انجام دیا، بھارتی ٹیم نے آج(ہفتے کو ) پریکٹس سیشن میں حصہ لیا اس موقع پر  کپتان کے سارے کاموں اور ذمہ داریوں  کو دھونی نے سرانجام دیا۔ انہوں نے ایڈن گارڈن کی پچ کا معائنہ کیا، مقامی پچ ایکسپرٹس کی رائے لی اور کھلاڑیوں سے بھی پچ کے حوالے سے بات کی،بھارتی  کپتان ورات کوہلی نے اس پریکٹس سیشن میں حصہ نہیں لیا جبکہ کوچ انیل کمبلے بھی گراؤنڈ میں موجود نہیں تھے۔

ایڈن گارڈن سٹیڈیم میں دو گھنٹے تک پریکٹس سیشن کے بعد دھونی پچ کی طرف گئے، اس کے بعد گھٹنوں کے بل بیٹھ کر اس کا معائنہ کیا اور دونوں ہتھیلیوں سے پچ کو چھو کر جائزہ لیا ، دھونی کے ساتھ قومی سلیکٹر اور بنگال کے سابق کپتان دیواگ گاندھی بھی موجود  تھے جن سے دھونی نے طویل بات چیت کی۔واضح رہے کہ  کٹک میں کھیلے گئے  دوسرے ون ڈے کے دوران بھی دھونی وکٹ کے پیچھے کافی سرگرم  رہے اور   وہ  فیلڈ جمانے کے ساتھ ساتھ کپتان کوہلی کو تجاویز دیتے بھی نظر آئے ۔پریکٹس سیشن میں کوہلی کے علاوہ آر اشون، یوراج سنگھ، لوکیش راہل، روندر جدیجہ اور دل پنڈیا نے بھی حصہ نہیں لیا، میدان میں بیٹنگ کوچ سنجے بانگڑ بھی موجود تھے۔

مزید : کھیل