گیمبیا پر طویل عرصہ حکمرانی کرنے والے یحییٰ جامع کا حکومت چھوڑنے کا اعلان

گیمبیا پر طویل عرصہ حکمرانی کرنے والے یحییٰ جامع کا حکومت چھوڑنے کا اعلان
گیمبیا پر طویل عرصہ حکمرانی کرنے والے یحییٰ جامع کا حکومت چھوڑنے کا اعلان

  

بنجول(ڈیلی پاکستان آن لائن)گیمبیا پر طویل عرصہ حکمرانی کرنے والے یحییٰ جامع نے اعلان کیا ہے کہ وہ اپنے عہدے سے دست بردار ہو جائیں گے۔

سرکاری ٹیلی ویڑن پر نشر ہونے والے اعلان میں انھوں نے کہا ہے کہ ضروری نہیں ہے کہ خون کا ایک قطرہ بھی بہے،میں اپنے ضمیر کے مطابق اس عظیم ملک کی قیادت سے دست بردار ہونے کا فیصلہ کیا ہے، اور میں گیمبیا کے تمام شہریوں کا تہہِ دل سے شکریہ ادا کرتا ہوں۔

ٹرمپ کو روسی حلیف سمجھنا مغربی تجزیہ کاروں کی بڑی غلطی ہے:روس

جامع کا یہ اعلان اس وقت سامنے آیا ہے جب انھوں نے گنی اور موریطانیہ کے صدر سے بات چیت کی، تاہم جامع نے یہ نہیں کہا کہ کیا شرائط طے ہوئی ہیں۔

واضح رہے کہ جامع کو دسمبر میں ہونے والے انتخابات میں شکست ہو گئی تھی، اور ان کے جانشین آداما بارو نے گذشتہ روز سینیگال میں اپنے عہدے کا حلف اٹھایا تھا،تاہم جامع نے کہا تھا کہ انتخابات میں بےضابطگیاں ہوئی ہیں اور ان کے نتائج کو ماننے سے انکار کر دیا تھا،آداما بارو نے صدارتی انتخابات میں یحییٰ جامع کو شکست دی تھی،کئی مغربی افریقی ملکوں کی فوجیں گیمبیا میں تعینات ہیں، ان ملکوں نے دھمکی دی تھی کہ اگر جامع خود اقتدار سے الگ نہ ہوئے تو انھیں زبردستی معزول کر دیا جائے گا،یحییٰ جامع نے پارلیمان سے تین ماہ کی توسیع حاصل کر لی تھی،جامع 1992 سے اقتدار میں ہیں اور وہ ماضی میں کہہ چکے ہیں کہ وہ ’اربوں سال تک‘ حکومت کریں گے۔

مزید : بین الاقوامی