چینی اور برطانوی کمپنیاں ملکر بنگلادیش میں کوئلے سے بجلی تیار کریں گے

چینی اور برطانوی کمپنیاں ملکر بنگلادیش میں کوئلے سے بجلی تیار کریں گے

ڈھاکہ (آئی این پی ) چینی اور برطانوی کمپنی ملکر بنگلہ دیش میں کوئلے سے بجلی تیار کریں گے، دونوں کے درمیان معاہدہ طے پا گیا ،معاہدے کی کل مالیت تقریبا تین ارب پچاس کروڑ امریکی ڈالر ہے ۔ چائنہ ریڈیو انٹر نیشنل کے مطابق چینی کمپنی پاور چائنا اور ایک برطانوی کمپنی جیسی ایم بنگلہ دیش میں کوئلے سے بجلی تیار کریں گے۔ اس حوالے سے بنگلہ دیش کے دارالحکومت ڈھاکہ میں ایک معاہدے پر دستخط ہوئے۔ اس منصوبے کے پہلے حصے میں دوہزار میگا واٹ کاایک منصوبہ بنگلہ دیش کے ضلع دیناجپور کے علاقے پھولباری میں قائم کیا جائے گا۔اس معاہدے کی کل مالیت تقریبا تین ارب پچاس کروڑ امریکی ڈالرز بنتی ہے۔

یہ بیرون ملک کسی بھی چینی کمپنی اور مغربی کمپنی کے درمیان ہوے والا تعاون کا ایک مثالی اور منفرد معاہدہ ہے۔معاہدے پر دستخط کرنے کی تقریب میں پاور چائنا کے چیرمین دنگ چھنگ قوو نے کہا کہان کی کمپنی دنیا میں سب سے بڑی بجلی کے منصوبے تعمیر کرنے والی کمپنی ہے۔پاور چائنا ہمیشہ سے پوری دنیا کی توانائی اور بنیادی تنصیبات کی تعمیر پر گامزن رہی ہے اور اپنیملک کی جانب سے دی بلیٹ اینڈ روڈ انیشیٹو پر عملدرآمد کے لیے مسلسل کوشش کرتی ہے۔بنگلہ دیش میں پاور چائنا نے تین منصوبوں پر سرمایہ لگایا ہے۔ سرمایہ کاری کی مالیت ایک ارب انچاس کروڑ امریکی ڈالرز بنتی ہے۔اور بائیس منصوبوں پر عملدرآمد کے معاہدوں پر دستخط کیے گیے ہیں جن کی مالیت چار ارب ساٹھ کروڑ امریکی ڈالرز بنتی ہے۔ان میں سے"پھولباری منصوبہ" سب سے بڑا ہے۔امید ہے کہ فریقین اس منصوبے پر جلد از جلدعملد درآمد کو آگے بڑھائیں گے تاکہ مشترکہ تعمیر اور باہمی مفادات کا حصول ممکن ہوسکے۔

مزید : عالمی منظر