ساہیوال واقعہ میں راؤ انوار والا معاملہ ہوا تو بڑی بدنصیبی ہوگی،خالدمقبول صدیقی

ساہیوال واقعہ میں راؤ انوار والا معاملہ ہوا تو بڑی بدنصیبی ہوگی،خالدمقبول ...

کراچی(این این آئی) متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کے کنوینر اوروفاقی وزیر برائے انفامیشن ٹیکنالوجی ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی نے کہا ہے کہ اگر ساہیوال واقعہ میں راؤ انوار والا معاملہ ہوا تو بڑی بدنصیبی ہوگی،ساہیوال واقعے جیسے عناصر کے خلاف تحقیقات ہونی چاہیے تاکہ اندازہ ہو کہ یہ کس کے لیے کام ہورہا ہے،پاکستان میں جب بھی چیزیں بہتر ہوتی ہیں تو اسطرح کے واقعات ہوجاتے ہیں،فاروق بھائی جب چاہیں پارٹی میں آجائیں۔اتوارکواین ای ڈی یونیورسٹی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹرخالد مقبول صدیقی نے کہا کہ فاروق بھائی کے ایم کیوایم سے متعلق بیانات پر ان سے بات کی جاسکتی ہے فاروق بھائی کے لیے پارٹی کے دروازے کھلے ہیں وہ جب چاہیں پارٹی میں آسکتے ہیں،فاروق ستار اور سندھ حکومت کا مستقبل ایک ہی جیسا دیکھ رہے ہیں ،صحافی نے جب سوال کیا کہ زرداری صاحب کہتے ہیں وفاقی حکومت گرجائے گی؟ تو انہوں نے جواب دیا کہ اگرحکومت خود ہی گرگئی تو زرداری صاحب کا کیا کمال ہوگا؟خالدمقبول صدیقی نے کہاکہ حیدر آباد جلسے میں کارکنوں کی تعداد بتارہی ہے کہ ایم کیوایم پاکستان کے چاہنے والے بہت ہیں جب کہ عمران خان صاحب کیساتھ ملاقاتیں ہوتی رہتی ہیں۔ انہوں نے کہاکہ ساہیوال واقعے جیسے عناصر کے خلاف تحقیقات ہونی چاہیے تاکہ اندازہ ہو کہ یہ کس کے لیے کام ہورہا ہے،پاکستان میں جب بھی چیزیں بہتر ہوتی ہیں تو اسطرح کے واقعات ہوجاتے ہیں ، اس طرح کے واقعات پرکمیٹی سے نہیں کمٹمنٹ سے کام بنے گا،اگر ساہیوال واقعہ میں راؤ انوار والا معاملہ ہوا تو بڑی بدنصیبی ہوگی ،انفرادی طور پر وزیراعظم سے مل کر اس پر بات کروں گا ۔ انہوں نے کہاکہ کراچی پیکیج پچاس ارب روپے پرمشتمل ہے لیکن اسے اسکیم وائزکراچی والوں کے سامنے لائیں گے۔

خالدمقبول صدیقی

مزید : کراچی صفحہ اول